مہاراجہ رنجیت سنگھ کی برسی کے لیے پاکستان آئے سکھ یاتری لاہور پہنچ گئے

لاہور خوبصورت شہر، لاہوریے مہمان نوازی میں اپنی مثال آپ ہیں، سردار بلویندر سنگھ

منگل جون 19:43

لاہور۔26 جون(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) مہاراجہ رنجیت سنگھ کی برسی کے لیے پاکستان آئے سکھ یاتری ننکانہ صاحب سے سپیشل ٹرین کے ذریعے لاہور پہنچ گئے، متروکہ وقف املاک بورڈ کے افسران نے گوردوارہ ڈیرہ صاحب آمد پر سکھ یاتریوں کا استقبال کیا اور پھولوں کے گلدستے پیش کیے۔ اس موقع پر گوردوارہ کو خوبصورت انداز میں سجایا گیا اور سکیورٹی کے بھی خصوصی انتظامات کیے گئے تھے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سکھ جتھہ لیڈر سردار بلویندر سنگھ نے لاہور آمد پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ میں کئی سالوں بعد یہاں لاہور آیاہوں اور گریٹر اقبال پارک سمیت لاہور کی خوبصورتی دیکھ کر بہت خوش ہوں، لاہوریے مہمان نوازی میں اپنی مثال آپ ہیں ، یہاں پر گزارے پل انسان ساری زندگی یاد رکھتا ہے، حکومت کی جانب سے ملنے والی سکیورٹی اور انتظامی سہولیا ت پر شکر گزار ہیں۔

(جاری ہے)

انھوں نے کہا کہ ہم سکھ مسلم دوستی کے رشتے کو مزید مضبوط بنانے کیلئے پر عزم ہیں۔ ڈپٹی پارٹی لیڈر سردار جگ موہن سنگھ نے کہا کہ ہم جہاں بھی گئے ہر جگہ بہت عزت اور پیار ملا ہے اور کسی قسم کی کوئی دشواری نہیں ہوئی۔کالڑہ مشن کے پارٹی لیڈر سردار ڈاکٹر درشن سنگھ نے کہا کہ یہاں آکر اپنا پن محسوس ہوتا ہے ، لاہوریے کھلے دل کے مالک اور محبتیں بانٹنے والے لوگ ہیں اس وجہ سے یہاں آکر اداسی نہیں ہوتی، مینار پاکستان پارک کی خوبصورتی اور نئے انداز نے ہمیں حیران کر دیا۔

ڈپٹی سیکرٹری عمران گوندل کا کہنا تھا کہ چیئرمین اور سیکرٹری بورڈ کی خصوصی ہدایات پر مجھ سمیت بورڈ کے دیگر افسران اور سیکورٹی عملہ دن رات مہمانوں کی خاطر داری میں مصروف عمل ہے ، سکھ یاتری ایک روز لاہور قیام کرنے کے بعد گوردوارہ کرتار پور ناروال اور روہڑی صاحب ایمن آباد میں حاضری کیلئے روانہ ہوں گے ۔

متعلقہ عنوان :