ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کو عہدے سے ہٹانے کیلئے درخواست کے قابل سماعت ہونے سے متعلق مزید دلائل طلب

منگل جون 20:23

لاہور۔26 جون(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) لاہور ہائیکورٹ نے نئے تعینات کئے گئے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب امتیاز رشید صدیقی کو عہدے سے ہٹانے کیلئے دائر درخواست کے قابل سماعت ہونے سے متعلق مزید دلائل طلب کر لئے،،لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس امین الدین خان کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے کیس کی سماعت کی،درخواست گزار بیرسٹر سید محمد جاوید اقبال جعفری نے موقف اختیار کیا کہ ایڈووکیٹ جنرل پنجاب امتیاز رشید صدیقی کو میرٹ کی بجائے سیاسی بنیادوں پر تعینات کیا گیا ،انہوں نے کہا کہ ایڈووکیٹ جنرل کا عہدہ آئینی ہے مگر تعیناتی غیر آئینی طریقے سے کی گئی،انہوں نے بتایا کہ نئے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب امتیاز رشید صدیقی میرٹ پر پورا نہیں اترتے،انہوں نے استدعا کی کہ عدالت ایڈووکیٹ جنرل پنجاب امتیاز رشید صدیقی کی میرٹ کے برعکس تعیناتی کی بناء پرعہدے سے ہٹانے کے احکامات جاری کرے،جس پر عدالت نے درخواست کے قابل سماعت ہونے سے متعلق مزید دلائل طلب کرتے ہوئے سماعت ملتوی کر دی۔