ن لیگی رہنما دانیال عزیز کی سیاسی قسمت کا فیصلہ کل ہو گا

سپریم کورٹ میں دانیال عزیز کے خلاف توہین عدالت کا فیصلہ کل سنایا جائے گا

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان بدھ جون 16:24

ن لیگی رہنما دانیال عزیز کی سیاسی قسمت کا فیصلہ کل ہو گا
اسلام آباد (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔27جون 2018ء) پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما دانیال عزیز کی سیاسی قسمت کا فیصلہ کل ہو گا۔۔سپریم کورٹ میں دانیال عزیز کے خلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ کل سنایا جائے گا۔۔دانیال عزیز کے خلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ 3 مئی کو محفوظ کیا گیا تھا۔جو کہ کل سنایا جائے گا۔جسٹس شیخ عظمت سعید کی سربراہی میں تین رکنی بنچ کے تحت اس کیس کا فیصلہ سنایا جائے گا۔

سپریم کورٹ نے توہین عدالت کرنے پر دانیال عزیز کے خلاف نوٹس لیا تھا۔ یاد رہے سپریم کورٹ نے دانیال عزیز کے خلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ 3 مئی کو محفوظ کیاتھا ۔دوران سماعت جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دیئے عدلیہ کی اتھارٹی نہ رہے تو کیا رہ جائے گا، تمام وکیلوں کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔

(جاری ہے)

جسٹس عظمت سعید نے اسفتسار کیا دانیال عزیز کی تعلیم کیا ہے ؟ وکیل نے جواب دانیال عزیز اکانومسٹ ہیں، جس پر جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دیئے اکانومسٹ کا کام بولنا نہیں ،کام کرنا ہوتا ہے۔

دانیال عزیز نے کہا عدلیہ کی آزادی کے لیے جدوجہد کی ہے، بغیر کسی اگر مگر عدلیہ کا مکمل احترام کرتا ہوں، میرے بال سفید ہوگئے، زمانے نے مجھے درست کر دیا ہے، عدلیہ اور قوانین کی بہتری کے لیے جدوجہد کی ہے۔ جس پر جسٹس عظمت سعید نے کہا دانیال عزیز  یہ تقریر آپ نے عدالت کے باہر کرنی ہے، آپ نے باہر کی تقریر کمرہ عدالت میں شروع کر دی۔جسٹس عظمت سعید کے ریمارکس پر کمرہ عدالت میں قہقہے لگ گئے۔

دانیال عزیز نے کہا میری زندگی ادارے بنانے میں گزری، جس پر جسٹس عظمت سعید نے کہا ہمارے سامنے یہ مقدمہ نہیں ہے، جیسے لوگ جلسہ سے جانا شروع ہوتے ہیں، آپ کی باتیں سن کر بھی جانے لگے ہیں۔۔وکیل دانیال عزیزنے دلائل میں کہا کہ دانیال عزیز عدالتی توہین کے مرتکب نہیں ہوئے عدالت عظمی ایک آئینی ادارہ ہے، جسٹس شیخ عظمت سعید نے کہا کہدانیال عزیز پر فرد جرم عدالتی فیصلوں پر تنقید کرنے پرعائد نہیں کی، نجی ٹی وی پر چلنے والی ویڈیو کے نکات کی تردید نہیں کی گئی جب کہ اظہار رائے کی آزادی پر بھی توازن ہوتا ہے، موچی گیٹ پر جو بات کی جاتی ہے وہ پارلیمنٹ کے فلورپر نہیں ہوسکتی۔