اپیلٹ ٹریبونل نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو تاحیات نااہل قرار دے دیا

نااہلی آرٹیکل 62ون ایف کے تحت ہوئی فیصلے کے خلاف اپیل دائر کروں گا ، میں نے کوئی معلومات نہیں چھپائی ، مجھ پر معلومات یا حقائق چھپانے کا الزام غلط ہے،شاہد خاقان عباسی

بدھ جون 19:06

اپیلٹ ٹریبونل نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو تاحیات نااہل قرار ..
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 جون2018ء) اپیلٹ ٹریبونل راولپنڈی نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو تاحیات نااہل قرار دے دیا،ان کی نااہلی آرٹیکل 62ون ایف کے تحت ہوئی ، اپیلٹ ٹریبونل کا فیصلہ قبول کرتے ہیں ، میں فیصلے کے خلاف اپیل دائر کروں گا ، میں نے کوئی معلومات نہیں چھپائی ، مجھ پر معلومات یا حقائق چھپانے کا الزام غلط ہے ۔

(جاری ہے)

بدھ کو اپیلٹ ٹریبونل راولپنڈی نے شاہد خاقان عباسی کو نااہل قرار دے دیا، اپیلٹ ٹریبونل راولپنڈی نے شاہد خاقان عباسی کو آرٹیکل 62ون ایف کے تحت نااہل کیا ، اپیلٹ ٹریبونل نے مؤقف اختیار کیا کہ شاہد خاقان عباسی نے اپنے ووٹرز کے سامنے حقائق چھپائے ، حقائق چھپانے پر وہ صادق اور امین نہیں رہے ،آرٹیکل 62ون ایف کے تحت نااہلی تاحیات ہوتی ہے ۔ حلقہ این اے 157سے شاہد خاقان عباسی کی کووررنگ امیدوار ان کی اہلیہ ثمینہ شاہد ہیں ۔۔شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اپیلٹ ٹریبونل کا فیصلہ قبول کرتے ہیں ، میں فیصلے کے خلاف اپیل دائر کروں گا ، میں نے کوئی معلومات نہیں چھپائی ، مجھ پر معلومات یا حقائق چھپانے کا الزام غلط ہے ۔