نجی تعلیمی اداروں کامستقبل کیاہوگا،ہوپ کااہم اجلاس طلب

موجودہ حالات میں سکولزچلانامشکل ہوچکاہے ،حکومت خدشات دور کرے،عقیل رزاق

بدھ جون 20:06

پشاور۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 جون2018ء)ہب آف پرائیویٹ ایجوکیشن (HOPE)نے عدالتی فیصلے کے بعدپرائیویٹ تعلیمی اداروں کودرپیش مسائل ومشکلات سے متعلق اہم اجلاس یکم جولائی بروزاتوارصبح دس بجے بمقام ورسک ماڈل سکول اینڈکالج ورسک روڈپشاورمیںطلب کرلیاہے اجلاس میں مرکزی وصوبائی قائدین سمیت تمام اضلاع کے عہدیدارشریک ہونگے ۔

(جاری ہے)

ہو پ کے صوبائی صدر عقیل رزاق نے میڈیاکوبتایاکہ ایم ڈی ریگولیٹری اتھارٹی کی ہٹ دھرمی اور عدالتی فیصلے کے بعد نجی تعلیمی ادارے مالی مشکلات اور والدین وطلبہ تذبذب کاشکار ہیں اس بحرانی کیفیت سے نکلنے کیلئے ہوپ کااہم اجلاس طلب کرلیاگیاہے جس میں مستقبل کالائحہ عمل طے کیاجائیگاانہوںنے کہاکہ موجودہ حالات میں پرائیویٹ سکولزکوچلانامشکل ترین ہوچکاہے اورمالکان حکومتی رویے سے نالاں ہوکراداروں کی بندش کاسوچ رہے ہیں جسکے نتیجے میں حکومت کیلئے 70لاکھ کے قریب بچوں کو پڑھوانامشکل ہوجائے گا ضرورت اس امر کی ہے کہ حکومت نجی سکولزمالکان کے خدشات کو دورکرے اور افہام وتفہیم سے تما مسائل کاحل نکالاجائے انہوں نے صوبے کے تمام پرائیویٹ تعلیمی اداروں کے سربراہان کو اجلاس میں شرکت کی استدعاکی ہے۔