صادق آباد، تھانہ کوٹ سبزل بہن بھائی کے اغواء میں ملوث ملزمان کیخلاف کاروائی کرنے سے گریزاں

بدھ جون 20:21

صادق آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 جون2018ء) صادق آباد کاتھانہ کوٹ سبزل خاندان کے اغواء میں ملوث ملزمان کیخلاف کاروائی کرنے سے گریزاں ،چک نمبر 210 پی کے رہائشی گل حسن نے میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کر تے ہوئے بتایا کہ علی شیر اور اسکے بیٹے راہب اور حمید کا میرے گھر آنا جانا تھا جنہوں نے میری بیوی،، بیٹی اور بیٹے کو ورغلا کر اغواء کر لیا‘ جب ہم نے ان سے پوچھا تو وہ انکاری ہو گئے ، ہم نے ان کے کال ریکارڈ ڈیٹا نکلوایا تو اس میں ان کا اغواء کرنا ثابت ہو گیا جس پر میں نے تھانہ کوٹ سبزل میں ان کیخلاف درخواست دی ،ایس ایچ او تھانہ کوٹ سبزل نے ان کو تھانہ میں پابند کیا اور دونوں فریقین کی باتیں سنی جس میں علی شیر اور اس کے بیٹے قصور وار نکلے مگر اس کے باوجود ایس ایچ او تھانہ کوٹ سبزل نے کوئی کاروائی نہ کی ہے گل حسن اوراس کے عزیز و اقارب نے میڈیا کے سامنے احتجاج کر تے ہوئے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے میری بیوی،،بیٹی اور بیٹے کو بازیاب کرواکر مجرموں کو قرار واقعی سزا دی جائے۔

متعلقہ عنوان :