ن لیگی رہنما خواجہ سعد رفیق کے خلاف نیب نے ریکارڈ ڈھونڈ نکالا

خواجہ سعد رفیق نے ایک کمپنی بنا رکھی تھی، اس کمپنی کے بنک اکاؤنٹ میں کتنی رقم موجود تھی؟ سینئیر صحافی نے بتا دیا

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین بدھ جولائی 11:29

ن لیگی رہنما خواجہ سعد رفیق کے خلاف نیب نے ریکارڈ ڈھونڈ نکالا
لاہور (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 04 جولائی 2018ء) : نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے سینئیر صحافی چوہدری غلام حسین نے کہا کہ ہمارے حکمران خوفناک حد تک جرائم میں ملوث ہیں کہ ہم اندازہ نہیں کر سکتے۔ میں پوری قوم سے کہتا ہوں کہ ان کے چہرے پہچان لیں، یہ کس قسم کی گفتگو کرتے ہیں، ہمیں آ کر ٹی وی چینلز پر بھاشن دیتے ہیں لیکن یہ لوگ خود جرائم میں اس قدر گھر چکے ہیں کہ کوئی سُن کر کانوں کو ہاتھ لگا لے۔

چودہری غلام حسین نے بتایا کہ ن لیگی رہنما خواجہ سعد رفیق نے اپنی بیوی محترمہ غزالہ اور بھائی کے نام پر ایک کمپنی کھولی ،جسے پیراگون نے ٹیک اوور کیا، یا یوں کہیں کہ اس کمپنی نے پیراگون کو ٹیک اوور کر لیا۔ انہوں نے کہا کہ جب ان سے اس کمپنی سے متعلق دریافت کیا گیا تو یہ لوگ جھوٹ بولتے ہیں اور کہتے ہیں کہ ایسا کچھ نہیں ہے۔

(جاری ہے)

اس کمپنی کا ایک بنک اکاؤنٹ تھا لیکن پکڑے جانے کے ڈر سے انہوں نے اس بنک کا تمام ریکارڈ ٹیمپر کر دیا ۔

چوہدری غلام حسین نے انکشاف کیا کہ لاہور کے علاقہ مغل پورہ میں موجود حبیب بنک لمیٹڈ کی ایک برانچ میں اس کمپنی کا اکاﺅنٹ کھلا تھا ، اور کمپنی کے اس اکاؤنٹ میں کروڑوں روپے کی ٹرانزیکشن ہوتی تھیں لیکن انہوں نے اپنا اثرو رسوخ استعمال کر کے تمام تر ریکارڈ تبدیل کر دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں چئیرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال کو داد دینی چاہئیے کہ انہوں نے نیب میں اچھے لوگ رکھے ہیں۔

میرے پاس اطلاع ہے کہ نیب اس بنک اور اس ریکارڈ تک پہنچ گیا ہے اور انہوں نے اس میں ملوث افراد کو بھی واضح کہہ دیا ہے کہ یہ ہمارے پاس ریکارڈ ہے تم غائب کرو یا نہ کرو، ہمیں ریکارڈ مل گیا ہے۔واضح رہے کہ ن لیگ کےسینئیر رہنماؤں پر عدالتی فیصلوں کی تلواریں لٹک رہی ہیں، عام انتخابات 2018ء سے قبل مسلم لیگ ن کئی مشکلات کا شکار ہے جبکہ شریف خاندان کے خلاف ایون فیلڈ ریفرنس کیس کا فیصلہ بھی محفوظ کر لیا گیا جو 6 جولائی کو سنایا جائے گا۔ سیاسی مبصرین کے مطابق ایون فیلڈ ریفرنس کیس کا فیصلہ مسلم لیگ ن کے سیاسی مستقبل پر کافی اثر انداز ہوگا۔