نواز شریف کے خلاف فیصلے کے بعد شہباز اور حمزہ خوشیاں منا رہے ہیں، دونوں مجھے دعائیں دے رہے ہیں،

مریم نواز کہتی تھیں کہ میری لندن تو کیا پاکستان میں بھی کوئی جائیداد نہیں، حکومت جاتی ہے وہ خالی خزانہ اور مولانا فضل الرحمان کو چھوڑ کرجاتی ہے، عوام نے شکلیں نہیں دیکھنی بلکہ بلے پر ٹھپا لگانا ہے، ایک وقت آئے گا کہ لوگ باہر سے پاکستان میں نوکریاں ڈھونڈنے آئیں گے،ہم ملک میں زرعی انقلاب لے کر آئیں گے، ہم کسانوں کیلئے ریسرچ سینٹر بنائیں گے، ان کو نئی منڈیاں فراہم کریں گے۔ پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کا بورے والا میں جلسہ سے خطاب

بدھ جولائی 21:03

نواز شریف کے خلاف فیصلے کے بعد شہباز اور حمزہ خوشیاں منا رہے ہیں، دونوں ..
بورے والا(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 جولائی2018ء) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ نواز شریف کے خلاف فیصلے کے بعد شہباز شریف اور حمزہ شہباز خوشیاں منا رہے ہیں، دونوں مجھے دعائیں دے رہے ہیں، مریم نواز کہتی تھیں کہ میری لندن تو کیا پاکستان میں بھی کوئی جائیداد نہیں ہے، حکومت جاتی ہے وہ خالی خزانہ اور مولانا فضل الرحمان کو چھوڑ کرجاتی ہے، عوام نے شکلیں نہیں دیکھنی بلکہ بلے پر ٹھپا لگانا ہے، ایک وقت آئے گا کہ لوگ باہر سے پاکستان میں نوکریاں ڈھونڈنے آئیں گے ہم ملک میں زرعی انقلاب لے کر آئیں گے، ہم کسانوں کیلئے ریسرچ سینٹر بنائیں گے، ان کو نئی منڈیاں فراہم کریں گے۔

بدھ کو بورے والا میں انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ میرا دل کہہ رہا ہے کہ تبدیلی انقلاب آنے والا ہے، 26جولائی کو ایک نئی صبح طلوع ہوگی، نواز شریف کے خلاف فیصلے کے بعد شہباز شریف اور حمزہ شہباز خوشیاں منا رہے ہیں، دونوں مجھے دعائیں دے رہے ہیں، شہباز شریف وزیراعظم بننے کی تیاری کررہے ہیں ، بے بی بلاول نے زندگی میں کوئی نوکری نہیں کی اور وزیراعظم بننے کی تیاری کررہے ہیں، مریم نواز کہتی تھیں کہ میری لندن تو کیا پاکستان میں بھی کوئی جائیداد نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ وہ قوم اوپر جاتی ہے جو قانون کی حکمرانی پر یقین رکھتی ہے، یورپ میں نظام ایسا ہے کہ جو محنت کرتا ہے اس کو صلہ ملتا ہے، ہم پاکستان کو فلاحی ریاست بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم کسانوں کیلئے ریسرچ سینٹر بنائیں گے، ان کو نئی منڈیاں فراہم کریں گے، ہم نئے طریقے لے کر آئیں گے، جو حکومت جاتی ہے وہ خالی خزانہ اور مولانا فضل الرحمان کو چھوڑ کرجاتی ہے، عوام نے شکلیں نہیں دیکھنی بلکہ بلے پر ٹھپا لگانا ہے، ایک وقت آئے گا کہ لوگ باہر سے پاکستان میں نوکریاں ڈھونڈنے آئیں گے، ہم ملک میں زرعی انقلاب لے کر آئیں گے، ملک میں تمام پالیسیاں امیروں کیلئے ہے، ووٹ کو عزت دو چور کو عزت نہ دو۔

Your Thoughts and Comments