کسی جماعت کے خلاف سیاسی بنیادوں پر کارروائی نہیں کررہے ،ْاز شریف کامعاملہ سیاسی نہیں،عدالتی ہے ،ْحسن عسکری

،ْکوشش ہوگی کہ نواز شریف کی واپسی کا معاملہ خیریت سے گزر جائے ،ْ تمام قانونی تقاضے پورے ہوں ،ْ نگران وزیر اعلیٰ

جمعہ جولائی 00:00

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 جولائی2018ء) نگراں وزیراعلیٰ پنجاب ڈاکٹر حسن عسکری نے کہا ہے کہ نواز شریف کامعاملہ سیاسی نہیں،عدالتی ہے ،ْکوشش ہوگی کہ نواز شریف کی واپسی کا معاملہ خیریت سے گزر جائے اور تمام قانونی تقاضے پورے ہوں۔ایک انٹرویومیں انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی آمد سے قبل ایئرپورٹ پر سیکیورٹی سسٹم بنانے کے لئے کام چل رہا ہے۔

انہوںنے کہا کہ کسی پارٹی کے خلاف سیاسی بنیادوں پر کارروائیاں نہیں کی جارہیں، تمام جماعتوں کی قیادت کو ممکنہ سیکیورٹی فراہم کرنیکی کوشش کی جارہی ہے۔نگراں وزیر اعلیٰ پنجاب نے کہا کہ نواز شریف کے داماد کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی گرفتاری کا کیس مختلف نوعیت کا ہے، سب جانتے ہیں کہ نواز شریف کے داماد کو قومی احتساب بیورو (نیب) کے افسران نے گرفتار کرنا تھا، اس دوران ہنگامہ اور نعرہ بازی کرکے گرفتاری کے عمل میں رکاوٹ ڈالی گئی۔

انہوں نے کہا کہ کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی گرفتاری میں رکارٹ ڈالنے والے افراد کے خلاف کارروائی کرنا ضروری تھی لیکن اس تمام کارروائی کا تعلق کسی کی انتخابی مہم میں رکاوٹ ڈالنا نہیں ہے۔نگراں وزیر اعلیٰ پنجاب نے بتایا کہ سیکیورٹی کے حوالے سے دھمکیاں ملتی ہیں تو اس کے بعد سیاسی رہنمائوں کو ان سے آگاہ کر دیا جاتا ہے اور سیکیورٹی کا بندوبست کیا جاتا ہے۔

ڈاکٹر حسن عسکری نے کہا کہ ماضی کی نسبت اس بار انتخابی مہم پہلے سے زیادہ جوش و خروش کے ساتھ کی جا رہی ہے جس کے دوران ضابطہ اخلاق پر عمل درآمد کرانا ایک بڑا کام ہے۔انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کو نگراں حکومت پنجاب سے دو قسم کی شکایات ہیں، ایک وہ شکایت کا تعلق ہم سے نہیں بلکہ الیکشن کمیشن یا وفاقی اداروں سے ہے، جس پر ہم واضح طور پر کہتے ہیں کہ الیکشن کمیشن سے بات کریں۔پروفیسر ڈاکٹر حسن عسکری نے کہا کہ اگر مسلم لیگ (ن) کی انتخابی مہم میں رکاوٹ ڈالی جارہی ہے تو اس سلسلے میں (ن) لیگ نگراں حکومت سے بات کرسکتی ہے ،ْہم اس معاملے پر واضح اقدامات کرتے لیکن یہ کہنا کہ صرف ایک جماعت کے خلاف کارروائی کر کے دوسری جماعتوں کیلئے آسانی پیدا کی جا رہی ہے تو یہ بات درست نہیں ہے۔

Your Thoughts and Comments