نئے پاکستان میں خواجہ سعد رفیق کو پہلا چالان کر دیا گیا

خواجہ سعد رفیق کی گاڑی 145 میل فی گھنٹہ کی رفتار سے جا رہی تھی، اوور سپیڈ کے باعث چالان کیا گیا،موٹروے پولیس

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان اتوار اگست 15:17

نئے پاکستان میں خواجہ سعد رفیق کو پہلا چالان کر دیا گیا
لاہور (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔19اگست 2018ء) مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر ریلوے خواجہ سعدرفیق کا موٹر وے پر چالان کر دیا گیا۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ خواجہ سعد رفیق کا چالان اوور اسپیڈنگ پر کیا گیا ہے۔ موٹروےپولیس کے مطابق آج صبح تقریباً ساڑھے9 بجے راوی ٹول پلازہ کے قریب خواجہ سعد رفیق کا اوور اسپیڈنگ پر چالان کیا گیا ہے ۔

خواجہ سعد رفیق کی گاڑی 145 میل فی گھنٹہ کی رفتار سے جا رہی تھی۔جس کے بعد ان کو چالان کر دیا گیا۔سلام آباد راوی ٹول پلازہ کے قریب سعد رفیق کو اوور اسپیڈنگ پر ساڑھے 7 سو روپے کا چالان کیا گیا ہے۔یاد رہے اس سے پہلے بھی کئی سیاسی رہنماؤں کو چالان کیا گیا ہے۔الیکشن سے قبل سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کو چالان کیا گیا تھا۔

(جاری ہے)

شاہد خاقان عباسی بذریعہ موٹروے سفر کر رہے تھے کہ تیزرفتاری پر موٹروے پولیس نے ان کا چالان کر دیا ۔

موٹروے پولیس کے اہلکاروں نے سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کا ساڑھے 7 سو روپے کا چالان کیا۔ چالان کے بعدموٹروے پولیس کے اہلکاروں نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے ساتھ تصاویر بھی بنوائیں تھیں۔خیال رہے کہ اس سے قبل خیبرپختونخواہ کے ٹریفک پولیس کے اہلکار اپنی بے باکی اور بلاامتیاز کارروائیوں پر خبروں کی زینت بنے رہتے تھے۔

کے پی کےپولیس نے ہر خاص و عام پر قانون کی بالادستی کو ترجیح دی اور ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر کسی وزیر کا چالان کرنے یا اپنے اعلیٰ افسر کو جُرمانہ کرنے سے بھی نہیں گھبرائے۔معروف شخصیات کا چالان ہونے پر سیاسی تجزیہ کاروں نے اسے ایک اچھا شگون قرار دیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ ہماری سکیورٹی فورسز جب تک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کو بلا خوف و خطر جُرمانہ نہیں کریں گے تب تک ملک ترقی نہیں کر سکے گا اور قانون کی بالادستی کو یقینی نہیں بنایا جا سکے گا۔ ایسے میں معروف شخصیات کا چالان ہونا اس بات کا ثبوت ہے کہ کوئی بھی قانون سے بالاتر نہیں ہے۔