پاکستان ایک مرتبہ پھرعالمی ایٹمی توانائی ایجنسی کے بورڈ آف گورنرز کا رکن منتخب

پاکستان کا انتخاب سفارتی سطح پر بڑی کامیابی اور جوہری ٹیکنالوجی کے پٴْرامن استعمال کے شعبے میں پاکستان کے نمایاں کردار کا بین الاقوامی سطح پر اعتراف ہے ،ْ ترجمان ایٹمی توانائی کمیشن

ہفتہ ستمبر 14:20

پاکستان ایک مرتبہ پھرعالمی ایٹمی توانائی ایجنسی کے بورڈ آف گورنرز ..
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 ستمبر2018ء) پاکستان کو ایک مرتبہ پھر 2 سال کے لیے انٹرنیشنل اٹامک انرجی ایجنسی (آئی اے ای ای) کے بورڈ آف گورنرز کا رکن منتخب کرلیا گیا۔سر کاری ریڈیو کی رپورٹ کے مطابق یہ انتخاب آسٹریا کے شہر ویانا میں منعقدہ آئی اے ای اے کے ایک اجلاس میں کیا گیا۔اجلاس میں پاکستانی وفد کی قیادت پاکستان اٹامک انرجی کمیشن کے چیئرمین محمد نعیم نے کی۔

(جاری ہے)

ترجمان پاکستان ایٹمی توانائی کمیشن کے مطابق پاکستان کا انتخاب سفارتی سطح پر ایک بڑی کامیابی اور جوہری ٹیکنالوجی کے پٴْرامن استعمال کے شعبے میں پاکستان کے نمایاں کردار کا بین الاقوامی سطح پر اعتراف ہے ،ْواضح رہے کہ آئی اے ای اے کے 35 رکن ممالک میں سے 11 ارکان کو 2 سال کے عرصے کیلئے منتخب کیا جاتا ہے۔انٹرنیشنل اٹامک انرجی ایجنسی ایک عالمی تنظیم ہے جو جوہری توانائی کے پرامن استعمال اور ایٹمی ہتھیاروں کی تیاری سمیت فوجی مقاصد کے لیے اس کے استعمال کو روکنے کی غرض سے قائم کیا گیا ،ْآئی اے ای اے کا ہیڈکوارٹر آسٹریا کے شہر ویانا میں ہے ،ْیہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی اور سیکیورٹی کونسل کو جوابدہ ہے۔