سی پیک کے تحت سکھر ملتان موٹر وے منصوبہ سے 23 ہزار افراد کو روزگار ملا، سی پیک سیکرٹریٹ

پیر ستمبر 13:22

سی پیک کے تحت سکھر ملتان موٹر وے منصوبہ سے 23 ہزار افراد کو روزگار ملا، ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 ستمبر2018ء) چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ (سی پیک ) سے روزگار کے لاکھوں مواقع پیدا کئے ہیں، سکھر ملتان موٹر وے منصوبہ سے 23 ہزار سے زائد افراد کا روزگار وابستہ ہے اور اس سے نہ صرف علاقہ کی ہنر مند افرادی قوت مستفید ہو رہی ہے بلکہ ملک کے دیگر علاقوں کے افراد کا روزگار بھی وابستہ ہے، منصوبہ کی تکمیل سے غربت کی شرح میں نمایاں کمی لائی جا سکے گی۔

سی پیک سکرٹریٹ کے حکام نے کہا ہے کہ سی پیک خطے کی مشترکہ ترقی اور خوشحالی کا ضامن ہے اور پاکستان مستقبل میں سی پیک منصوبہ کی تکمیل کے بعد اپنے جغرافیائی محل وقوع کے باعث یورپ اورایشیائی ممالک کے درمیان پل کا کردار ادا کرے گا جس سے خطے کی تجارت ،اقتصادی اور سماجی روابط کے اضافہ میں مدد ملے گی ۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ معاشی طور پرمستحکم پاکستان ہی دہشت گردی اور انتہا پسندی کو شکست دے سکتا ہے جس سے خطے کے علاقائی امن و استحکام اور ترقی و خوشحالی کو یقینی بناسکتا ہے۔

پاکستان میں اقتصادی و صنعتی ترقی کیلئے پاک چین اقتصادی راہداری کے تحت مشترکہ حکمت عملی سے ہنر مند افرادی قوت کی دستیابی اور دونوں ممالک کی کاروباری برادری کے باہمی روابط کو بھی فروغ دیا جارہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سی پیک کے تحت انفراسٹرکچر، توانائی، اقتصادی زونز کے قیام سمیت مختلف منصوبہ جات کی تکمیل سے پاکستان نہ صرف پائیدار ترقی کے حصول میں کامیاب ہوگا بلکہ لاکھوں جوانوں کو روزگار کے مواقع بھی میسر آئیں گے اور عوام کی سماجی ترقی وبہبود کو یقینی بنایا جاسکے گا ۔

انہوں نے مزید کہا کہ سی پیک کے تحت تعمیر کی جانے والی سکھر ملتان موٹر وے منصوبہ سے 23 ہزار سے زائد افراد کا روزگار وابستہ ہے اور اس سے نہ صرف علاقہ کی ہنر مند افرادی قوت مستفید ہو رہی ہے بلکہ ملک کے دیگر علاقوں کے افراد کا روزگار بھی وابستہ ہے۔