حکومت کا ہیلتھ پروگرام کے تحت صحت کارڈ منصوبے کا دائرہ کار پورے ملک تک پھیلانے کا فیصلہ

صحت کارڈ منصوبہ مرحلہ وار 3 سال کی مدت کے دوران ملک کے تمام اضلاع تک پھیلایا جائے گا، یومیہ 2 ڈالرز سے کم آمدن والے افراد کارڈ کے حقدار ہوں گے

muhammad ali محمد علی پیر ستمبر 20:00

حکومت کا ہیلتھ پروگرام کے تحت صحت کارڈ منصوبے کا دائرہ کار پورے ملک ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 ستمبر2018ء) حکومت کا ہیلتھ پروگرام کے تحت صحت کارڈ کا دائرہ کار پورے ملک تک پھیلانے کا فیصلہ، صحت کارڈ منصوبہ مرحلہ وار 3 سال کی مدت کے دوران ملک کے تمام اضلاع تک پھیلایا جائے گا، یومیہ 2 ڈالرز سے کم آمدن والے افراد کارڈ کے حقدار ہوں گے۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے غریب عوام کو صحت کی بہترین سہولیات کی فراہمی کیلئے کیا گیا وعدہ پورا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس سلسلے میں وزیراعظم صحت کارڈ منصوبے کی منظوری دیں گے۔ وزیراعظم ہیلتھ پروگرام کے تحت صحت کارڈ منصوبے کا دائرہ کار پورے ملک تک پھیلایا جائے گا۔ ذرائع کے مطابق منصوبے کے تحت پاکستان کے تمام اضلاع میں غریب افراد کو صحت کارڈ فراہم کیے جائیں گے۔ صحت کارڈ ان لوگوں کو فراہم کیے جائیں گے جن کی یومیہ آمدنی  ڈالرز سے بھی کم ہے۔

(جاری ہے)

منصوبے پر سالانہ 25 سے 30 ارب روپے لاگت آئے گی۔

جبکہ منصوبے کے نفاذ کیلئے صوبائی حکومتوں سے بھی مشاورت کی جائے گی۔ منصوبے کے آغاز کا فیصلہ وزیراعظم کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کے اجلاس میں کیا جائے گا۔ یہاں یہ بات بھی واضح رہے کہ تحریک انصاف ماضی میں خیبرپختونخواہ میں اسی طرز کا منصوبہ متعارف کروا چکی ہے۔ خیبرپختونخواہ میں صحت ہیلتھ کارڈ 2 کروڑ لوگوں میں تقسیم کیے گئے تھے۔ اس منصوبے کے باعث 2 کروڑ لوگوں کو صحت کی بہتر سہولیات میسر آئی تھیں۔ اب اس منصوبے کو ملک بھر میں پھیلانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔