کراچی میں سابق منگیتر نے بیوٹی پارلر کے باہر سے دلہن کو اغوا کر لیا

لڑکی نے ہی اپنے سابق منگیترکو پارلر بلایا تھا اور وہ اپنی مرضی سے اس کے ساتھ گئی، پولیس کا موقف

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان منگل ستمبر 11:53

کراچی میں سابق منگیتر نے بیوٹی پارلر کے باہر سے دلہن کو اغوا کر لیا
کراچی (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔25 ستمبر 2018ء) کراچی میں سابق منگیتر نے بیوٹی پارلر کے باہر سے دلہن کو اغوا کر لیا.میڈیا رپورٹس کے مطابق کراچی میں نارتھ ناظم آباد کےعلاقے تیموریہ میں بیوٹی پارلر کے باہر سے دلہن لاپتہ ہوگئی۔نئی نویلی دلہن کے والدین کا کہنا ہے کہ لڑکی کو اغوا کرنے والا اس کا سابق منگیتر ہے۔لڑکی کے والدین نے مزید کہا کہ ان کی بیٹی کی 30 ستمبرکو شادی تھی اور مایوں کی تیاری کے لیے وہ اپنی بہن کے ساتھ تیموریہ میں واقع ایک بیوٹی پارلرگئی تھی۔

دوسری جانب پولیس کا دلہن کے اغوا ہونے کے واقعے سے متعلق کہنا ہے کہ ممکنہ طورپر لڑکی نے ہی اپنے سابق منگیترکو پارلر بلایا تھا اور وہ اپنی مرضی سے اس کے ساتھ چلی گئی۔ایش ایچ اور تیموریہ کے مطابق اغوا سے قبل لڑکی کا اپنے سابق منگیتر کے ساتھ رابطہ تھا۔

(جاری ہے)

چوہدری طفیل کے مطابق پولیس نے پارلر انتظامیہ سے بھی پوچھ گچھ کی ہے، انہوں نے کہا کہ بہت جلد لڑکی کوبازیاب کرالیا جائے گا۔

واضح رہے اس سے قبل بھی ایک ایسا پی واقعہ پیش آیا تھا جب شرقپور کے موضع غازی پور میں دلہن شادی کے روز ہی اغوا ہو گئی تھی۔اور بارات واپس لوٹ گئی۔رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ موضع غازی پور کا رہائشیریاض احمد کی بیٹی آمنہ بی بی گاؤں کے ایک بیوٹی پارلر سے تیار ہو کر اپنی بھابھی کے ہمراہشادی ہال سے باہر آ رہی تھی کہ راستے میں کرامت عرف بودی وغیرہ نے دلہن کو زبردستیاغوا کر لیا۔

دلہن کو مخلتف جگہوں ہر تلاش بھی کیا گیا۔لیکن تلاش کرنے کے باوجود بھی دلہن کا کوئی سراغ نہ مل سکا۔ جس کی وجہ سے بارات کو دلہن کے بغیر واپس جانا پڑا۔مقامی پولیس نے دلہن کے بھائی مشتاق کے کہنے پر واقعے کی رپورٹ درج کر لی،بتایا گیا ہے کہ نئی نویلی دلہن کو اغوا کرنے کے الزام میں آٹھ افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔

متعلقہ عنوان :