ملک کا معاشی حب کراچی مشکل دور سے گذر چکا، شہریوں نے گذشتہ انتخابات میں خوف سے نکل کر اپنی رائے کا اظہار کیا جو کہ خوش آئند ہے۔

گورنر سندھ عمران اسماعیل

بدھ ستمبر 19:10

ملک کا معاشی حب کراچی مشکل دور سے گذر چکا، شہریوں نے گذشتہ انتخابات ..
کراچی۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 ستمبر2018ء) گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ ملک کا معاشی حب کراچی مشکل دور سے گذر چکا ہے جسے کسی صورت میں واپس نہیں آنے دیا جائے گا کیونکہ کراچی کے شہری خوف کی فضا ء سے نکل چکے ہیں اور انہوں نے گذشتہ انتخابات میں اپنی رائے کا کھل کر اظہار کیا ہے۔ بدھ کو جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعیت پنجابی سوداگران دہلی کی جانب سے اپنے اعزاز میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پر جمعیت کے صدر سعید شفیق جنرل سیکریٹری سلیم فاروقی اور دیگر عہدیداران بھی موجود تھے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ وفاقی حکومت کراچی کے لئے ایک پروگرام لے کر آئی ہے جس کا وزیراعظم عمران خان نے دورہ کراچی میں اعلان کیا ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ وفاق کے زیر انتظام ترقیاتی منصوبوں کی جلد تکمیل پر بھی خصوصی توجہ دی جارہی ہے تاکہ عوام کو ان سے جلد از جلد استفادہ کرنے کا موقع مل سکے۔

گورنر سندھ نے کہا کہ اسٹریٹ کرائمز پر قابو پانے کے لئے آئی جی سندھ سے تفصیلی ملاقات کرکے انہیں ہدایات دی ہیں اور جلد اس کے نتائج عوام کے سامنے آئیں گے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیمی اداروں میں منشیات کے استعمال کے رجحان میں اضافہ تشویشناک ہے جس کے لئے سی پی ایل سی کی طرز پر ایک ادارہ تشکیل دیا جانا چاہئے۔ گورنرسندھ نے کہا کہ پانی کی کمی انتہائی اہم مسئلہ ہے، ایک عالمی رپورٹ کے مطابق اگر یہی صورتحال برقرار رہی اور ہم نے پانی کے ذخیرہ پر مناسب توجہ نہ دی تو پھر 2025ء تک پاکستان بھی دنیا کے ان ممالک کی فہرست میں شامل ہو سکتا ہے جہاں پانی کی کمیابی ہے اس لئے ڈیمز بنانا انتہائی ناگزیر ہو چکا ہے، چیف جسٹس سپریم کورٹ آف پاکستان نے ڈیمز کے حوالے سے جو مہم شروع کی ہے وزیر اعظم پاکستان بھی اس میں بھرپور حصہ لے رہے ہیں کیونکہ یہ ہماری قومی ضروریات کے لئے ازحد ضروری ہے، اس ضمن میں وزیر اعظم کی ہدایت پر گورنرہائوس میں بھی ڈیمز فنڈ ریزنگ مہم میں 75 کروڑ روپے کی خطیر رقم کے فنڈز کے وعدے کئے گئے جو کہ خوش آئند ہے کہ ہماری قوم اس مسئلہ پر پوری یکسوئی کے ساتھ سنجیدگی کامظاہرہ کررہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم کی پوری زندگی اس بات کا ثبوت ہے کہ انہوں نے ہمیشہ مشکل سے مشکل ٹاسک کو پورا کیا وہ انتھک محنت کے عادی ہیں، کرکٹ گرائونڈ ہو، شوکت خانم اسپتال یا پھر نمل یونیورسٹی انہوں نے ہر ایک ٹاسک کو بخوبی پورا کیا یہی وجہ ہے کہ ہمیں کامل یقین ہے کہ اب سیاست میں ان کے کئے گئے وعدے بھی پورے ہوں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ درس گاہوں میں منشیات کے استعمال کی اطلاعات تشویشناک بات ہے اس ضمن میں متعلقہ اداروں کو ہدایت دے دی گئی ہے کہ تعلیمی درس گاہوں کے تقدس کو کسی بھی صورت میں پامال نہیں ہونے دیا جائے۔

گورنر سندھ نے مزید کہا کہ شہر کے مسائل کے حل کے کئے ترجیحی بنیادوں پر اقدامات اٹھائے جارہے ہیں اس ضمن میں عبد الخالق اللہ والا ٹائون کے مسائل کے حل کے لئے جلد میئر کراچی اور کمشنر کراچی کے ساتھ اجلاس میں مسائل کے حل پر بھرپور توجہ دی جائے گی۔ تقریب سے خطاب میں جمعیت کے صدر سعید شفیق اور جنرل سیکریٹری سلیم فاروقی نے جمعیت کی کارکردگی باالخصوص قبرستان، تعلیمی مراکز اور طبی سہولیات کے حوالے سے تفصیلی سے آگاہ کرتے ہوئے بتایا کہ جمعیت کے تحت غریب اور نادار افراد کی کفالت، طبی سہولیات اور ان کے بچوں کو تعلیمی سہولیات فراہم کی جارہی ہے، اللہ والا ٹائون میں نکاسی و فراہمی آب کے مسائل عرصہ دراز سے حل طلب ہیں، گورنر سندھ سے امید ہے کہ وہ ان مسائل کے حل کے لئے ترجیحی بنیادوں پر توجہ دیں گے۔