قومی اور صوبائی اسمبلیوں کے ضمنی انتخاب،قومی اسمبلی میں ٹرن آئوٹ 28.31 فیصد جبکہ صوبائی اسمبلیوں میں مجموعی طور پر 35.71 فیصد رہا ،ْالیکشن کمیشن

منگل اکتوبر 21:44

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 16 اکتوبر2018ء) الیکشن کمیشن نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ قومی اور صوبائی اسمبلیوں کے ضمنی انتخاب میں قومی اسمبلی میں ٹرن آئوٹ 28.31 فیصد ،ْ صوبائی اسمبلیوں میں مجموعی طور پر 35.71 فیصد رہا۔الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے حلقے این اے 35 بنوں میں مجموعی ٹرن آئوٹ 21.39 فیصد، این اے 53 اسلام آباد میں 28.7 ، این اے 56 اٹک 39.09 ،این اے 60 راولپنڈی 25.98، این اے 63 راولپنڈی میں 33.01، این اے 65 چکوال 24.76 ، این اے 69گجرات 20.81، این اے 103 فیصل آباد48، این اے 124 لاہور 22.09 ، این اے 131 لاہور میں 31.76 اور این اے 243کراچی ایسٹ 15.71 فیصد رہا۔

(جاری ہے)

صوبائی اسمبلیوں میں پی پی 3 اٹک میں 43.87، پی پی 27 جہلم میں 40.64، پی پی 103 فیصل آباد 52.32، پی پی 118 ٹوبہ ٹیک سنگھ میں 51.11، پی پی 164 لاہور میں 46.94، پی پی 165 لاہور میں 54.89، پی پی 201ساہیوال میں 45.73 ، پی پی 222 ملتان میں 47.49، پی پی 261 رحیم یار خان 30.32 ، پی پی 272مظفر گڑھ میں 38.45، پی پی 292 ڈیرہ غازی خان 43.52، پی ایس 30 خیر پور میں 36.81، پی ایس 87 ملیر میں 32.85، پی کے 3 سوات میں 30.44 ، پی کے 7 سوات میں 22.94، پی کے 44 صوابی میں 18.18، پی کے 53 مردان میں 24.07، پی کے 61 نوشہرہ میں 17.64، پی کے 64 نوشہرہ میں 20.54، پی کے 78پشاور میں 22.46،پی کے 97 ڈیرہ اسماعیل خان میں 17.41، پی کے 99 ڈیرہ اسماعیل خان میں 43.35 اور بلوچستان اسمبلی کے حلقہ پی بی 35 مستونگ میں 39.43 فیصد رہا۔