پوسٹل سروسز محکمے کو خسارے سے نکالنا ہمارا مقصد اور مشن ہے،مرادسعید

محکمہ ڈاکخانہ 10 ارب روپے کے خسارے سے چل رہا ہے، پوسٹل سروسز کے 135 ارب کے اثاثہ جات موجود ہیں انکامناسب انداز اور خاطر خواہ طریقے سے استعمال نہیں کیا گیا ہے پوسٹل سروسز میں نئی روح اور جان پھونکیں گے، نئے جذبوں کے تقاضوں کی روشنی میں استوار کریں گے، وزیر مملکت مواصلات کا جنرل پوسٹ آفس میلوڈی میں دو نئی سروسز " الیکٹرانک منی آرڈر اور آج کی ڈاک آج ہی تقسیم" کی افتتاحی تقریب سے خطاب

منگل نومبر 21:28

پوسٹل سروسز محکمے کو خسارے سے نکالنا ہمارا مقصد اور مشن ہے،مرادسعید
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 نومبر2018ء) وزیر مملکت برائے مواصلات و پوسٹل سروسز مراد سعید نے کہا ہے کہ پوسٹل سروسز محکمے کو خسارے سے نکالنا ہمارا مقصد اور مشن ہے۔اس وقت محکمہ ڈاکخانہ 10 ارب روپے کے خسارے سے چل رہا ہے جبکہ پوسٹل سروسز کے 135 ارب کے اثاثہ جات موجود ہیں۔جن کو مناسب انداز اور خاطر خواہ طریقے سے استعمال نہیں کیا گیا ہے۔

پوسٹل سروسز میں نئی روح اور جان پھونکیں گے اور نئے جذبوں کے تقاضوں کی روشنی میں استوار کریں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جنرل پوسٹ آفس میلوڈی میں دو نئی سروسز " الیکٹرانک منی آرڈر اور آج کی ڈاک آج ہی تقسیم" کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ وفاقی سیکرٹری سروسز پیر بخش خان جمالی سمیت دیگر اعلی افسران بھی اس موقع پر موجود تھے۔

(جاری ہے)

وزیر مملکت برائے مواصلات مراد سعید و پوسٹل سروسز مراد سعید نے مزید کہا کہ رقوم کی ترسیل موجودہ دور کی اہم ضرورت ہے اور الیکٹرانک منی آرڈر سروس کے ذریعے پاکستان پوسٹ اس مارکیٹ میں اپنا حصہ بڑھا سکتا ہے۔پاکستان کی یہ سروس نہ صرف تیز تر ہے بلکہ عوام کے لئے مسابقتی قیمت مہیا کی جا رہی ہے۔ اس سروس کا اصل مقصد گھریلو اور کاروباری صارفین کو سہولت فراہم کرنا ہے۔

آج کی ڈاک آج ہی تقسیم کرنے سے پاکستان چھوٹے کاروباری اور گھریلو صارفین کو کم نرخوں میں ایک بہتر سروس پیش کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں اس موقع پر پاکستان پوسٹ سروس کے افسران اور عملے سے توقع کروں گا کہ وہ ان خدمات کی فراہمی کے لئے جانفشانی سے کام کر کہ صارفین کا اعتماد بحال کریں۔ انہوں نے یقین دلایا کہ حکومت پاکستان پوسٹ کو ایک جدید اور منافع بخش ادارہ بنانے کے لئے ہر طرح کی مدد فراہم کرے گی۔

قبل ازیں ڈائریکٹر جنرل پوسٹ سروسز روبینہ طیب یزدانی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہوطن عزیز کے 19 شہروں میں الیکٹرانک سٹرکچر کا سیٹ اپ کا کام کیا ہے جو کہ محکمہ ویلیو ایڈٹ سروس کا پیش خیمہ ہے۔ اس وقت 85 فیصد دیہی عوام کو ڈاکخانہ کے نیٹ ورک کے ذریعے خدمات فراہم کر رہے ہیں اور یہ منی آرڈر بھی فوری طور کی بنیاد پر لوگوں کے گھروں میں ڈیلور ہو سکیں گے۔

اس وقت ملک میں سیم ڈے ڈیلوری کی کسی قسم کی کوئی بھی کورئیر سروس خدمات سرانجام نہیں دے رہی ہیمختلف قسم کی کمپنیوں کے ذریعے چند ہزار روپے بھیجنے کا طریقہ موجود ہیجبکہ ہم 50 ہزار روپے تک کی رقم بھیجنے کے اہل ہو گئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس لاجواب سروس کے آغاز سے ڈاک کی خدمت عوام کو دے رہے ہیں۔ وزیراعظم پاکستان عمران خان اور وزیر مملکت برائے مواصلات مراد سعید کی قیادت میں ڈاک ، کورئیر سروس،لاجسٹک سروس،آر ایف پی اور ڈاک کی ترسیل کینظام کو برق رفتاری کے ساتھ مکمل کرنے کے احکامات جاری کر دیئے ہیں۔ بعد ازاں وزیر مملکت برائے مواصلات مراد سعید نے جی پی اومیں سروس ڈیلوری کے مختلف شعبوں کا معائنہ کیا اور اعلی' افسران نے انہیں بریفنگ دی۔