حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کے اکاؤنٹس میں مشتبہ ٹرانزیکشن کا انکشاف

نیب نے حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کے اکاؤنٹس کی تفصیلات طلب کی تھیں

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین بدھ نومبر 13:53

حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کے اکاؤنٹس میں مشتبہ ٹرانزیکشن کا انکشاف
لاہور (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 14 نومبر 2018ء) :مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کے صاحبزادوں حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کے بینک اکاؤنٹس میں مشتبہ ٹرانزیکشنز کا انکشاف ہوا ہے ۔ ذرائع کے مطابق شہباز شریف اور ان کے بیٹوں کے خلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس کی تحقیقات جاری ہیں ۔ جس کےتحت نیب نے شہباز شریف اور ان کے بیٹوں کی بینکوں سے بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات طلب کی تھیں ۔

ذرائع کے مطابق شہبازشریف کا ریکارڈ ایک روز قبل ایک نجی بینک نے نیب کی جمع کروا دیا تھا۔ خیال رہے کہ رمضان شوگر ملز کے ڈائریکٹرز حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کے خلاف نیب کی تحقیقات کا سلسلہ جاری ہے۔ نیب نے سابق وزیراعلی پنجاب اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کے صاحبزادوں حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کو گذشتہ ماہ طلب کیا۔

(جاری ہے)

نیب نے حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کو آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے معاملے کی تحقیقات کے لیے طلب کیا ۔ واضح رہے کہ نیب کی زیر حراست دوران تفتیش سابق وزیراعلیٰ پنجاب اور مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے نیب کے سامنے اعتراف کیا کہ مالی معاملات میرا بیٹا سلمان دیکھتا ہے۔جس کے بعد نیب نے ان کے صاحبزادے سلمان شہباز کو طلب کرنے کا فیصلہ کیا تھا اور سلمان شہباز کو شہباز شریف کی مالی دستاویز بھی ساتھ لانے کا حکم دیا گیا تھا۔

سلمان شہباز سے فروخت کیے جانے والے رہائشی و کاروباری اثاثوں ، ذرائع آمدن ، کاغذات، مکمل انکم ٹیکس ، ویلتھ ٹیکس ریٹرنز ، ملکی وغیر ملکی کمپنیوں میں سرمایہ کاری اور شئیرز کی تفصیلات بھی طلب کی گئی تھیں۔ نیب ذرائع کے مطابق حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کے خلاف رمضان شوگر ملزکیس میں بھی بڑی پیش رفت دیکھنے میں آئی۔ رمضان شوگر ملز کے لیے چنیوٹ میں پل تعمیر کیا گیا جس کے لیے حکومتی خزانے سے 20 کروڑ روپے جاری کئے گئے۔