سیشن عدالت کا خادم حسین رضوی سمیت دیگر کیخلاف اندراج مقدمہ کے حوالے سے تھانہ سول لائنز کے ایس ایچ اوکو16نومبر تک رپورٹ جمع کرانے کا حکم

بدھ نومبر 17:00

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 نومبر2018ء) سیشن عدالت نے مذہبی جماعت کے سربراہ علامہ خادم حسین رضوی سمیت دیگر کیخلاف اندراج مقدمہ کی درخواست پر تھانہ سول لائنز کے ایس ایچ اوکو16نومبر تک ہر صورت میں رپورٹ جمع کرانے کا حکم دے دیا۔ ایڈیشنل سیشن جج محمد احمد خان کھرل نے سول سوسائٹی پاکستان کے سربراہ عبداللہ ملک کی علامہ خادم حسین رضوی و دیگر کے خلاف اندراج مقدمہ کی درخواست پر سماعت کی۔

(جاری ہے)

درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ علامہ خادم حسین رضوی کیخلاف اندراج مقدمہ کی درخواست تھانہ سول لائنز میں دی لیکن پولیس نے مقدمہ درج نہیں کیا۔ آسیہ بی بی کے سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد خادم حسین رضوی اور پیر افضل قادری نے ملک جام کرتے ہوئے ججز، آرمی چیف اور وزیر اعظم کے خلاف متنازعہ بیانات دئیے اس لئے عوام کو بغاوت پر اکسانے پر عدالت پولیس کو مقدمہ درج کرنے کا حکم دے اور عملدرآمد رپورٹ طلب کرے ۔عدالت نے عدالتی حکم کی خلاف ورزی پر اظہار برہمی کرتے ہوئے ایس ایچ او تھانہ سول لائنز کو 16نومبر تک ہر صورت رپورٹ عدالت میں جمع کرانے کا حکم دے دیا۔