حکومت کا نوجوانوں کے لیے نیا پاکستان یوتھ پروگرام لانچ کرنے کا فیصلہ

منصوبے کا باقاعدہ اعلان وزیراعظم عمران خان خود کریں گے

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین جمعرات نومبر 13:40

حکومت کا نوجوانوں کے لیے نیا پاکستان یوتھ پروگرام لانچ کرنے کا فیصلہ
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 15 نومبر 2018ء) : پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے نوجوانوں کے لیے ''نیا پاکستان یوتھ پروگرام '' لانچ کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے ملک بھر کے نوجوانوں کے لیے ''نیا پاکستان یوتھ پروگرام'' لانچ کرنے کافیصلہ کیا ہے جس کا باقاعدہ اعلان وزیراعظم عمران خان خود کریں گے۔ کچھ دیر قبل وزیراعظم عمران خان سے چیئرمین یوتھ پروگرام عثمان ڈار کی ملاقات ہوئی ۔

اس ملاقات میں عثمان ڈار نے نوجوانوں کے لیے حکومتی پیکج کی تیاری سے متعلق وزیراعظم عمران خان کو آگاہ کیا ۔ اسی ملاقات میں ملک بھر کے نوجوانوں کے لیے''نیا پاکستان یوتھ پروگرام'' لانچ کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ یہی نہیں بلکہ عمران خان کی ہدایت پر''یوتھ پلس پورٹل'' کا قیام بھی عمل میں لایا جائے گا۔

(جاری ہے)

چیئرمین یوتھ پروگرام عثمان ڈار کا کہنا تھا کہ گذشتہ 70 سالوں میں نوجوانوں کے لیے کوئی بڑی منصوبہ بندی نہیں کی گئی۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ یوتھ پروگرام منصوبے کے تحت نوجوانوں کو مکمل با اختیار بنائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے کہا منصوبہ حکومت کے100 روز پورے ہونے سے پہلے مکمل کیا جائے، نوجوانوں سے حکومتی سطح پر کمیونیکیشن نظام بہتر کیا جائے۔ موجودہ حکومت کے قیام میں نوجوانوں کا کردار فراموش نہیں کرسکتے۔ نوجوانوں کو تعلیم، تربیت اور روزگار کے بھرپور مواقع دیں گے۔

یاد رہے کہ گذشتہ روز وزیرِاعظم عمران خان کی زیر صدارت یوتھ پروگرام سے متعلق اجلاس ہوا تھا ، اجلاس میں یوتھ پروگرام سے متعلق جامع حکمت عملی پر تبادلہ خیال کیا گیا اور چیئرمین یوتھ پروگرام عثمان ڈار اور وزیراعظم کےمعاونین کی شرکت کی۔اجلاس میں وزیراعظم کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا تھا اس وقت ملک میں 13کروڑ آبادی 35 سال سے کم عمر کی ہے ۔

عمران خان نےکہا کہ 35 سال سے کم عمر نوجوان پاکستان کا اثاثہ ہیں، نوجوان ملک کی تقدیر بدل سکتے ہیں اور ہم ان نوجوانوں کو تمام مواقع فراہم کریں گے۔ اجلاس میں وزیراعظم عمران خان کو بریف کیا گیا کہ تعلیم و تربیت اور روزگار کی فراہمی پر خصوصی توجہ دینےکی ضرورت ہے، سابقہ دور میں اربوں روپے سے شروع یوتھ پروگرامز ادھورے چھوڑے گئے۔بریفنگ میں کہا گیا کہ کامن ویلتھ یوتھ گلوبل ڈیویلپمنٹ انڈیکس میں پاکستان کی رینکنگ کم ہوگئی۔ پاکستان کی پوزیشن2013ء کے مقابلے میں 154 تک آن پہنچی ہے۔ 2013ء میں پاکستان 89 نویں نمبر پر تھا، حکومت نوجوانوں کی تعلیم و تربیت اور روزگار کے لیے جامع پروگرام شروع کررہی ہے۔