مقبوضہ کشمیر ، پنچائتی انتخابی ڈھونگ کے خلاف آج عام ہڑتال کی جائے گی

انتخابات لاحاصل مشق کے سوا کچھ نہیں ، حریت قائدین

جمعرات نومبر 16:10

سرینگر (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 نومبر2018ء) مقبوضہ کشمیر میں پنچائتی انتخابات کا ڈھونگ رچانے کے آغاز پر آج ( جمعہ کو ) مکمل احتجاجی ہڑتال کی جائے گی ۔ اس موقع پر تمام کاروباری مراکز ، دفاتر اور تعلیمی ادارے بند رہیں گے جبکہ ٹریفک کا نظام بھی مفلوج رہے گا ۔ہڑتال کی اپیل حریت قائدین سید علی گیلانی ، میرواعظ عمر فاروق اور یاسین ملک نے کی ہے ۔

اپنے مشترکہ بیان میں حریت قائدین کا کہنا تھا کہ عوما نے جس طرح نام نہاد بلدیاتی انتخابات سے عملاً دورہ کر کے اسے کلی طور پر مسترد کر دیا ۔ یا اسی طرح نام نہاد پنچائتی انتخابات کے دنوں یقینی یعنی 29 ، 27 ، 24 ، 20 کو جن جن علاقوں میں یہ انتخابات ہونے جا رہے ہیں اس دوران ان علاقوں میں احتجاجی ہڑتال کریں اور ان نام نہاد انتخابات سے عملاً مکمل طور پر لاتعلقی کا اظہار کر کے انہیں مسترد کریں ۔

(جاری ہے)

قائدین نے کہا کہ یہ انتخابی ڈرامے کشمیریوں پر ظلم و ستم کی ای ک اور داستان بیان کرتے ہیں اور اس سے یہ بات عیاں ہوتی ہے کہ اگر پوری قوم حتی کہ مقامی ہند نواز جماعتیں بھی ان انتخابات کا بائیکاٹ کر رہی ہیں اس کے باوجود بھارت عوامی جذبات کی پرواہ کئے بغیر محض ریاست جموں و کشمیر میں اپنے قبضے کو دوام بخشنے کے لئے طاقت کے بل بوتے پر یہ انتخابات منعقد کرانے کا ڈرامہ رچا رہا ہے ۔ ۔