پاکستان کے بینکنگ سسٹم پر اب تک کا سب سے بڑا سائبر حملہ

روس سے تعلق رکھنے والے ہیکرز بینک اسلامی سے 82 کروڑ روپے سے زائد کی رقم لے اڑے

muhammad ali محمد علی جمعہ نومبر 19:51

پاکستان کے بینکنگ سسٹم پر اب تک کا سب سے بڑا سائبر حملہ
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 نومبر2018ء) پاکستان کے بینکنگ سسٹم پر اب تک کا سب سے بڑا سائبر حملہ، روس سے تعلق رکھنے والے ہیکرز بینک اسلامی سے 82 کروڑ روپے سے زائد کی رقم لے اڑے۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان کے بینکنگ سسٹم پر اب تک کے سب سے بڑے سائبر حملے کا انکشاف ہوا ہے۔ اسٹیٹ بینک کے ذرائع کے مطابق بینک اسلامی پر حال ہی میں کیے گئے حملے کے دوران ہیکرز کروڑوں روپے لے اڑے۔

بینک اسلامی کے سسٹم پر روس کے ہیکرز کی جانب سے حملہ کیا گیا۔ اس دوران ہیکرز نے بینک اسلامی کے ہزاروں صارفین کو ڈیٹا بھی چرا لیا۔ روسی ہیکرز نے بینک اسلامی کی 82 کروڑ روپے سے زائد کی رقم بھی چوری کر لی۔ اس سے قبل بینک اسلامی کی جانب سے دعویٰ کیا گیا تھا کہ ہیکرز کے حملے میں محض 60 لاکھ روپے کی رقم چوری کی گئی، تاہم اب تحقیقات کے بعد معلوم ہوا ہے کہ بینک اسلامی کے سسٹم پر ہونے والا سائبر حملہ کہیں سنگین نوعیت کا تھا۔

(جاری ہے)

اس سے قبل پاکستان کے بینکنگ ذرائع نے بھی ایف آئی اے کے اس دعویٰ کو مسترد کردیا تھا جس میں کہا گیا تھا کہ ملک کے تمام بینکوں کا ڈیٹا چوری ہوگیا ہے ۔ بینکنگ ذرائع کا کہنا تھا کہ بینک اسلامی نامی صرف ایک بینک پر ہیکرز نے حملہ کرکے 60 لاکھ روپے کی رقم چرائی تھی۔ اس کے علاوہ کسی دوسرے بینک سے ہیکنگ حملے میں رقم نہیں چرائی گئی، نہ ہی کسی قسم کا ڈیٹا ہیک کیا گیا ہے۔

تاہم اب معاملہ کچھ اور ہی نکلا ہے۔ واضح رہے کہ یہ تمام معاملہ اس وقت اٹھا جب کچھ روز قبل ایک خبر سامنے آئی تھی کہ ہیکرز نے پاکستان کے کچھ بینکوں کا نا صرف ڈیٹا ہیک کر لیا ہے، بلکہ صارفین کے پیسے بھی چرا لیے گئے ہیں۔ بعد ازاں اس حوالے سے ایک اور دعویٰ سامنے آیا جس میں کہا گیا کہ ہیکرز نے صرف چند نہیں بلکہ پاکستان کے تمام بینکوں کا ڈیٹا ہیک کر لیا ہے اور بڑے پیمانے پر صارفین کی رقوم چرا لی گئی ہیں۔ اسٹیٹ بینک نے بھی وضاحتی بیان جاری کرتے ہوئے ایسی خبروں کو بے بنیاد اور جھوٹا قرار دیا تھا۔ تاہم اب سامنے آنے والی تفصیلات کچھ اور ہی کہانی بیان کر رہی ہے۔ 

متعلقہ عنوان :