حکومت نے بچوں کے حقوق بارے آئینی اور بین الا قوامی ذمہ د اریوں کو پورا کرنے کیلئے قانون سازی سمیت عملدرآمدی اقدامات کا عزم کر رکھا ہے

وفاقی وزیر انسانی حقوق ڈاکٹر شیریں مزاری کا بچوں کے عالمی دن کے موقع پر پیغام

پیر نومبر 23:48

حکومت نے بچوں کے حقوق بارے آئینی اور بین الا قوامی ذمہ د اریوں کو پورا ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 نومبر2018ء) وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق ڈاکٹر شیریں مزاری نے کہا ہے کہ میرے لئے یہ امر باعث مسرت ہے کہ ہماری قوم عالمی برادری کے ساتھ 20 نومبر کو بچوں کا عالمی دن منا رہی ہے، اسلامی جمہوریہ پاکستان کے آئین میں بچوں کے حقوق کی ضمانت دی گئی ہے اسی لئے ہماری حکومت نے بچوں کے حقوق بارے آئینی اور بین الا قوامی ذمہ د اریوں کو پورا کرنے کیلئے قانون سازی سمیت عملدرآمدی اقدامات کا عزم کر رکھا ہے۔

انہوں نے یہ بات بچوں کے عالمی دن کے موقع پر اپنے پیغام میں کہی جو (آج) منگل 20 نومبر کو منایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سب سے بڑھ کر اہم یہ ہے کہ اسلام نے بھی بچوں کا تحفظ اور ان کی دیکھ بھال کرنا ہمارے لئے فریضہ قرار دیا ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ اس وقت پاکستان کو کئی چیلنجز درپیش ہیں اس حقیقت کے باوجود موجودہ حکومت نے بچوں کے تحفظ اور ان کی دیکھ بھال کیلئے متعدد اقدامات کئے ہیں جس سے ہمارے سیاسی عزم اور پختہ ارادے کی عکاسی ہوتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ وزارت انسانی حقوق نے نابالغوںکیلئے انصاف کے نظام کے ایکٹ2018ء اور آئی سی ٹی چائلڈ پروٹیکشن ایکٹ 2018ء جیسے کلیدی قوانین کو نافذ کیا ہے اور زینب الرٹ جیسے کئی قانونی بل تیار کئے ہیںتاہم ان قوانین پر حقیقی معنوں میں عملدرآمد کیلئے تمام شراکت داروں کو معاشرے میں برداشت پیدا کرنے اور بچوں کی صحت مندانہ نشوونما اور ترقی کیلئے مخلصانہ کوششیں کرنی چاہئیں۔

اس ضمن میں وزارت انسانی حقوق بڑی سرگرمی سے آگاہی مہمیں چلا رہی ہے اور موجودہ قوانین پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری قومی ذمہ داری ہے کہ ہم اپنے بچوں کا تحفظ کریں اور انہیں کسی امتیاز کے بغیر مساوی مواقع فراہم کریں۔ انہوں نے کہا کہ وہ توقع کرتی ہیں کہ حکومت کی کوششوں کے ساتھ ساتھ میڈیا اور سماجی شعبہ بھی فعال کردار ادا کرے گا تاکہ ہم اپنے بچوں کو محفوظ اور سازگار ماحول فراہم کر سکیں۔

متعلقہ عنوان :