پی ٹی آئی کی وفاقی حکومت آمر ضیاء الحق اور پرویز مشرف کی بی ٹیم ہے ،نثار کھوڑو

وفاقی حکومت کی عوام دشمن پالیسیوں کے خلاف احتجاجی تحریک چلانے سمیت ہر آپشن استعمال کرسکتے ہیں،صدر پیپلزپارٹی سندھ

منگل دسمبر 19:46

پی ٹی آئی کی وفاقی حکومت آمر ضیاء الحق اور پرویز مشرف کی بی ٹیم ہے ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 دسمبر2018ء) پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کے صدر نثار احمد کھوڑو نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کی وفاقی حکومت آمر ضیاء الحق اور پرویز مشرف کی بی ٹیم ہے جو کہ ملک کو آمرانہ طرز پر چلا رہی ہے اس لئے پاکستان پیپلز پارٹی وفاقی حکومت کی عوام دشمن پالیسیوں کے خلاف احتجاجی تحریک چلانے سمیت ہر آپشن استعمال کرسکتی ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیپلز سیکریٹریٹ کراچی میں شہید بینظیر بھٹو کی گیارہویں برسی اور گڑھی خدا بخش بھٹو میںجلسے کے انتظامات کے متعلق پارٹی رہنمائوں کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے کیا۔انھوںنے کہا کہ وزیراعظم عمران خان پارلیمنٹ میںدو تہائی اکژیت حاصل کرنے یا استعفیٰ سے بچنے اوراپنی ناکامی چھپانے کے لیئے قبل ازوقت انتخابات کی باتیں کر رہے ہیں اور ہم چاہتے ہیں کہ حکومت اپنی مدت پوری کرے تاہم عوام وفاقی حکومت سے نجات حاصل کرنے کے لیے تیار نظر آرہے ہیں اس لیے پیپلز پارٹی قبل ازوقت انتخابات کی حمایت کریگی ۔

(جاری ہے)

انھوںنے کہا کہ قبل ازوقت انتخابات سے قبل الیکشن کمیشن اپنی ماضی کی ناقص کارکردگی پر قوم سے معافی مانگیںاور سیاسی جماعتوں کو گارنٹی دی جائے کہ نئے انتخابات لاڈلی جماعت کواکثریت سے منتخب کرانے والے نہیں مگر شفا ف ہونگے۔ انھوںنے کہا کہ ملک پر قرضوں کا بوجھ 12سوارب تک پہنچ چکا ہے اور پیٹرول،ڈیزل، ڈالر،بجلی،گیس مہنگی ہونے کی وجہ سے عوام کی زندگی عذاب میں مبتلا ہوچکی ہے اور وفاقی حکومت عوام کو انڈوں اور مرغیوں کا کاروبار کرنے کا شوشہ دے کر عوام کو بیوقوف بنا رہی ہے ۔

انھوںنے کہا کہ ملک میں شفاف انتخابات ہونے کی صورت میں اس عوام دشمن وفاقی حکومت سے نجات ملنی چاہیے ۔ انھوںنے کہا کہ ملک میں آرڈیننس کے ذریعے قانون سازی کرنے کی باتیں ایڈہاک ازم اور آمرانہ سوچ ہے۔نثار کھوڑونے کہاکہ یو ٹرن کو جائز قرار دینے والے قوم سے دھوکہ کر رہے ہیں اور پیپلز پارٹی عوام کے ایشوز پر آواز اٹھاتی رہے گی۔انھوںنے کہا کہ پیپلز پارٹی کو مقدمات اور جیلوں سے ڈرایا نہیں جاسکتا کیونکہ پیپلز پارٹی کی قیادت احتساب کے نام پر آمروں کے دور سے انتقام کا مقابلہ کرتے آئی ہے اس لیے اگر شفاف احتساب کرنا ہے تو وزیر اعظم کی بہن علیمہ خان اور وفاقی وزراء کا بھی احتساب کیا جائے ۔

انھوںنے کہا کہ آمروں سے لیکر عمران خان تک لاڈلہ رہنے والے شیخ رشیداپنی پگڑی اور ٹوپی کا فکر کریں دوسروں کی پگڑی پر تنقید نہ کریں اگر شیخ رشید کو کوئی پگڑی نہیں پہناتا اس میں ہمارا کوئی قصور نہیں ۔انھوں نے کہا کہ نواز شریف کی خاموشی سے لگ رہا ہے کہ انھوںنے عمران خان کی حکومت سے این آر او کر لیا ہے اس لیئے نواز شریف اور مریم نواز خاموش ہیں۔

اس سے قبل پی پی پی سندھ کے صدر نثار کھوڑو کی صدارت میں پارٹی کے اجلاس میں شہید بینظیر بھٹو کی 27دسمبر کو گیارہویں برسی بھرپور منانے اور گڑھی خدا بخش بھٹو میں بڑا جلسہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔اجلاس میں برسی اور جلسے کے انتظامات کا جائزہ لیا گیا ۔ نثار کھوڑو نے کہا کہ 27دسمبر کو شہید بینظیر بھٹو کی برسی کے موقع پر گڑھی خدا بخش بھٹو میں دوپہر تین بجے بڑا جلسہ عام ہوگا جس سے پارٹی چیئرمین بلاول بھٹو زرداری اور آصف علی زرداری سمیت دیگر قائدین خطاب کرینگے۔جلسے میں ملک بھر سے لاکھوں عوام شرکت کرینگے۔