نواز شریف سے کوٹ لکھپت جیل میں مریم نواز ،پارٹی کے مرکزی رہنمائوں کی ملاقاتیں

مریم نواز والد کیلئے گھر سے کھانا بھی لیکر آئیں ، ملاقاتوں میں قانونی معاملات پر مشاورت ، ملکی صورتحال پر تبادلہ خیال کارکن اظہار یکجہتی کیلئے جیل کے باہر جمع رہے ،مریم نواز ، پارٹی رہنمائوں کی آمد پر پھولوں کی پتیاں نچھاور کیں، حق میں نعرے

جمعرات فروری 17:40

نواز شریف سے کوٹ لکھپت جیل میں مریم نواز ،پارٹی کے مرکزی رہنمائوں کی ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 28 فروری2019ء) سابق وزیر اعظم و پاکستان مسلم لیگ (ن) کے قائد محمد نواز شریف سے کوٹ لکھپت جیل میں انکی صاحبزادی مریم نواز اور پارٹی کے مرکزی رہنمائوں نے ملاقاتیں کیں ،تمام افراد نواز شریف سے ان کی صحت اور طبی سہولیات کی فراہمی بارے استفسار کرتے رہے ،رہنمائوں نے نواز شریف سے قانونی معاملات پر مشاورت کے ساتھ ملک کی مجموعی صورتحال پر بھی تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیر یر اعظم محمد نوازشریف سے کوٹ لکھپت جیل میں انکی صاحبزادی مریم نواز ،پارٹی رہنمائوں انجینئر امیر مقام ، مریم اورنگزیب ،طلال چوہدری ،سینیٹر آصف کرمانی سمیت دیگر نے ملاقاتیں کی۔ذرائع کے مطابق ملاقات کرنے والے تمام افراد نواز شریف کی صحت کے حوالے سے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے پوچھتے رہے اوران کی صحتیابی اور درازی عمر کی دعائیں دیتے رہے ۔

(جاری ہے)

بتایا گیا ہے کہ مریم نواز دوپہر کا کھانا ہمراہ لائی جو انہوں نے نواز شریف کے ساتھ اکٹھے بیٹھ کر کھایا ۔ ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ نواز شریف نے رہنمائوں سے ہونے والی ملاقاتوں میں ملک کی مجموعی صورتحال پر گفتگو کی جبکہ رہنمائوںنے قانونی معاملات پر مشاورت کے ساتھ ان سے رہنمائی بھی لی ۔نواز شریف سے اظہار یکجہتی کیلئے کارکن صبح سویرے سے ہی جیل کے باہر اکٹھے ہونا شروع ہو گئے جو وقفے وقفے سے اپنی قیادت کے حق میں نعرے لگاتے رہے ۔ مریم نواز اور پارٹی رہنمائوں کی آمد پر کارکنوںنے ان کی گاڑیوں پر پھولوں کی پتیاں نچھاور کیں اور حق میں نعرے لگائے ۔