بلوچستان کے دارلحکومت کوئٹہ کی تلی ندی میں اونچے درجے کا سیلاب، حفاظتی بند بہہ گیا

ہزاروں ایکڑ گندم کی فصل تباہ، کئی دیہات زیرِ آب، سینکڑوں افراد پھنس گئے

Usman Khadim Kamboh عثمان خادم کمبوہ پیر اپریل 19:21

بلوچستان کے دارلحکومت کوئٹہ کی تلی ندی میں اونچے درجے کا سیلاب، حفاظتی ..
کوئٹہ(اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین۔15اپریل2019ء) بلوچستان کے دارلحکومت کوئٹہ میں شدید بارشوں کے باعث تلی ندی میں طغیانی آ گئی، اونچے درجے کا سیلاب حفاظتی بند بہا لے گیا۔ حفاظتی بند بہنے کے باعث کوٹ مری اور چاچڑ سمیت 8آٹھ دیہات زیر آب آگئے ہیں جب کئی مزید دیہات کو بھی نقصان پہنچا ہے۔ حفاظتی بند ٹوٹنے سے ہزاروں ایکڑ پر کھڑی گندم کی تیار فصل تباہ ہو گئی ہے جبکہ 12سے زائد دیہات کا سبی سے زمینی رابطہ بھی منقطع ہو گیا ہے۔

(جاری ہے)

ریسکیو ٹیموں نے دیہات میں پھنسے ہوئے لوگوں کو نکالنے کے لیے کام شروع کر دیا ہے تاہم حفاظتی بند کی مرمت کے لیے ابھی تک مشینری نہیں پہنچ سکی۔ بھارت کی جانب سے بلوچستان میں داخل ہونے والی ہواؤں کی وجہ سے بلوچستان میں شدید بارشیں ہو رہی اس کے علاوہ پنجاب اور سندھ میں بھی بارشوں کا سلسلہ جاری ہے۔ پیر کے روز جنوبی پنجاب میں بھی طوفانی بارش ہوئی اور اب سبی میں شدید بارشوں کے بعد تلی ندی میں اونچے درجے کا سیلاب سے حفاظتی بند بہہ گیا ہے۔ اس کے علاوہ کوئٹہ اور سبی مین دریائے ناڑی میں بھی سیلاب کا الرٹ جاری کیا گیا ہے۔