مرکزی حکومت مکمل طور پر ناکام ہو چکی ،کوئٹہ اور حیات آباد کے واقعات نے حکومتی کارکردگی کا پول کھول دیا ہے،مولانا فضل الرحمن

بی آرٹی میں سات ارب روپے کی کرپشن ہوئی ہے لیکن نیب اور دیگر اداروں نے اس پر چھپ سادھ لی ہے، امیر جے یو آئی (ف)

بدھ اپریل 19:50

مرکزی حکومت مکمل طور پر ناکام ہو چکی ،کوئٹہ اور حیات آباد کے واقعات ..
مردان (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 17 اپریل2019ء) جمعیت علماء اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہاہے کہ مرکزی حکومت مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے کوئٹہ اور حیات آباد کے واقعات نے حکومت کی کارکردگی کا پول کھول دیا ہے،بی آرٹی میں سات ارب روپے کی کرپشن ہوئی ہے لیکن نیب اور دیگر اداروں نے اس پر چھپ سادھ لی ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعیت علماء اسلام کے رہنما حافظ اسماعیل کے بھائی حافظ بشیر احمد کی وفات پر مردان میںاظہار تعزیت کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوںنے مرحوم کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے انکے بلند درجات کے لئے فاتحہ خوانی کی ۔اس موقع پر پارٹی کے رہنما وسابق ایم پی اے مولانا امانت شاہ حقانی،مولانا تاج الامین جبل،مفتی سلیم حلیمی ،مولانا قیصر الدین اور مولانا ضیاء اللہ جان ہاشمی بھی موجود تھے۔

(جاری ہے)

مولانا فضل الرحمان نے کہاکہ عوام موجود ہ حکومت کی پالیسیوں سے تنگ آ چکی ہے ۔حکومت کے خلاف اپوزیشن ایک پیج پر ہے اور بہت جلد اسلام آباد لاک ڈاؤن ہوگا جس میں تیس لاکھ کے قریب عوام کو اکٹھا کرکے ایک دن میں عمران کا حکومت ختم کردیںگے۔

انہوں نے کہاکہ ایک کروڑ نوکریاں دینے والے یوٹیلٹی سٹور اور دیگر اداروں سے ملازمین کو نکال رہے ہیں جو کہ حکومت کی کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔انہوںنے کہاکہ حکومت اپنی ناکام پالیسیوں کی وجہ سے بوکھلاہٹ کی شکار ہو چکی ہے۔حکومت نے سو فیصد گیس اور بجلی مہنگی کر کے عوام سے منہ کا نوالہ چھین لیا ہے۔پہلے جون میں بجٹ پیش کیا جاتا تھا لیکن آج آئے روز بجٹ پیش کیا جارہا ہے۔انہوں نے کہاکہ حکومت نیب کے ذریعے سیاسی لوگوں کو انتقام کا نشانہ بنا کراپوزیشن کو خاموش کرانا چاہتی ہے لیکن انہیں یہ یاد رکھنا چاہیئے کہ اپوزیشن کی ایک آواز سے پورا ملک بلاک ہو سکتا ہے۔