رحمن ملک کا آئی جی پولیس بلوچستان کو ٹیلیفون ،سانحہ کوسٹل ہائے وے کی تفصیلات حاصل کیں

حکومت نیشنل ایکشن پلان پرصحیح معنوں میں عملدرآمد کرکے دہشتگردی کا خاتمہ کرے،سانحہ ہزارگنجی اور سانحہ کوسٹل ہائی وے کے ذمہ داروں کو جلد کیفرکردار تک پہنچایا جائے، بیان

جمعرات اپریل 13:27

رحمن ملک کا آئی جی پولیس بلوچستان کو ٹیلیفون ،سانحہ کوسٹل ہائے وے کی ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 18 اپریل2019ء) پاکستان پیپلز پارٹی کے سینیٹر اور سینٹ کی داخلہ کمیٹی کے چیئر مین سینیٹر رحمن ملک نے کوسٹل ہاوے واقعہ کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ حکومت نیشنل ایکشن پلان پرصحیح معنوں میں عملدرآمد کرکے دہشتگردی کا خاتمہ کرے،سانحہ ہزارگنجی اور سانحہ کوسٹل ہائی وے کے ذمہ داروں کو جلد کیفرکردار تک پہنچایا جائے۔

جمعرات کو سینیٹر رحمان ملک نے آئی جی پولیس بلوچستان سے ٹیلی فون پر سانحہ کوسٹل ہائے وے کی تفصیلات دریافت کیں۔ انہوںنے کہا کہ کوسٹل ہائی وے پر اس نوعیت کی دھشتگردی و بربریت انتہائی پریشان کن اور قابل مزمت ہے۔ انہوںنے کہاکہ سانحہ کوسٹل ہائی وے میں قیمتی جانوں کی ضیاع پر دلی دکھ و افسوس ہوا ہے۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ دشمن سوچے سمجھے سازش کے تحت بلوچستان کے امن کو تباہ کرنے کی سازش کر رہا ہے۔

انہوںنے کہاکہ لگتا ہے دھشتگردوں نے پھر سر اٹھانا شروع کیا ہے جسکو کچلنا ہوگا۔ انہوںنے کہاکہ تمام اختلافات کو بالائے تاک رکھتے ہوئے ہمیں دھشتگردی کیخلاف جنگ کیلئے متحد ہونے کی ضرورت ہے۔ انہوںنے کہاکہ حکومت نیشنل ایکشن پلان پرصحیح معنوں میں عملدرآمد کرکے دہشتگردی کا خاتمہ کرے۔ انہوںنے کہاکہ بلوچستان میں ایک ہفتے کے اندر یکے بعد دیگرے دہشتگردی کے واقعات انتہائی غور طلب ہیں۔ انہوںنے کہاکہ سانحہ ہزارگنجی اور سانحہ کوسٹل ہائی وے کے ذمہ داروں کو جلد از جلد کیفرکردار تک پہنچایا جائے۔