اصل مسئلہ اسد عمر نہیں عمران خان ہیں ،وزیر خزانہ کیساتھ ہی و زیراعظم کا بھی استعفیٰ آنا چاہیے تھا، مریم اور نگزیب

پاکستان کو معاشی واقتصادی تباہی اور بربادی کا شکار کر کے اسد عمر بڑی آسانی سے گھر چلتے بنے ، نیازی صاحب حکمرانی پر توجہ دینے کے ایشیائی بنک کے مشورے پر توجہ دیں،ملک کیخلاف معاشی دہشت گردی کرنے والوں سے حساب لیاجائے،اسد عمر کے استعفیٰ پر رد عمل

جمعرات اپریل 17:17

اصل مسئلہ اسد عمر نہیں عمران خان ہیں ،وزیر خزانہ کیساتھ ہی و زیراعظم ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 18 اپریل2019ء) پاکستان مسلم لیگ (ن )کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ اصل مسئلہ اسد عمر نہیں عمران خان ہیں ،وزیر خزانہ کیساتھ ہی و زیراعظم کا بھی استعفیٰ آنا چاہیے تھا، پاکستان کو معاشی واقتصادی تباہی اور بربادی کا شکار کر کے اسد عمر بڑی آسانی سے گھر چلتے بنے ، نیازی صاحب حکمرانی پر توجہ دینے کے ایشیائی بنک کے مشورے پر توجہ دیں،ملک کے خلاف معاشی دہشت گردی کرنے والوں سے حساب لیاجائے۔

بدھ کو پاکستان مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب کا وزیر خزانہ اسد عمر کے مستعفی ہونے پر رد عمل کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ اسد عمر کے ساتھ ہی و زیراعظم عمران خان کا استعفیٰ آنا چاہیے تھا۔ انہوںنے کہاکہ تحریک انصاف اور اسد عمر کی پالیسیاں اتنی ہی اچھی تھیں اور تمام خرابیوں کی ذمہ دار پاکستان مسلم لیگ (ن )ہی تھی تو پھر اسد عمر کو مستعفی ہونے کیلئے کیوں کہا گیا ۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ اسد عمر کا استعفیٰ اس امر کا اعتراف ہے کہ عمران خان کی پالیسیوں کی وجہ سے پاکستان اقتصادی بحران کا شکار ہوا، اصل مسئلہ اسد عمر نہیں بلکہ عمران خان خود ہے۔انہوںنے کہاکہ ملک کے خلاف معاشی دہشت گردی کرنے والوں سے حساب لیاجائے۔ انہوںنے کہاکہ پاکستان کو معاشی واقتصادی تباہی اور بربادی کا شکار کر کے اسد عمر بڑی آسانی سے گھر چلتے بنے ہیں۔

انہوںنے کہاکہ آئی ایم ایف کا یہ کہنا کہ پاکستانی معیشت خطے کی معاشی ترقی پر بوجھ بن جائیگی، پی ٹی آئی حکومت کی غلط پالیسیوں کا ثبوت ہے۔ مریم اور نگزیب نے کہاکہ ایشیائی بینک نے بھی کہہ دیا ہے کہ سی پیک سے بہتری آئیگی، عمران نیازی صاحب غور کریں۔انہوںنے کہاکہ نیازی صاحب حکمرانی پر توجہ دینے کے ایشیائی بنک کے مشورے پر توجہ دیں۔

انہوںنے کہاکہ 2018 میں ورلڈ بنک، آئی ایم ایف اور ایشیائی ترقیاتی بنک کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کی ترقی کی شرح چھ فیصد تھی ۔ انہوںنے کہاکہ گزشتہ 9ماہ میں معاشی بحران کی ذمہ دار پاکستان مسلم لیگ ن نہیں بلکہ نااہل اور نالائق وزیراعظم کی کی ٹیم ہے جس کی تصدیق آج خود وزیر اعظم نے کردی ہے۔ انہوںنے کہاکہ عمران نیازی صاحب کو چاہیے کہ اسد عمر کے بعد اب پنجاب کے وسیم اکرم کو خزانے کی ذمہ داری سونپ دیں۔

انہوںنے کہاکہ عمران نیازی صاحب نے اسد عمر اور پنجاب کے وسیم اکرم کو اپنے بہترین کھلاڑی قرار دیا تھا۔ انہوںنے کہاکہ وفاقی وزیر اطلاعات نے دو دن پہلے قوم سے جھوٹ بولا اور اسد عمر کے استعفیٰ کی تردید کی تھی۔انہوںنے کہاکہ جس حکومت کا وزیراعظم اور وزیرِ اطلاعات جھوٹا ہو اٴْسں کی کیا ساکھ رہتی ہے یہ جھوٹی حکومت کے کرائے کے جھوٹے ترجمان ہیں۔