بھلوال پولیس نے آرمی ملازم کے اندھے قتل کی واردات کا سراغ لگا کر ملزمان کو گرفتار کر کے اسلحہ بھی برآمد کر لیا

جمعہ اپریل 14:30

بھلوال پولیس نے آرمی ملازم کے اندھے قتل کی واردات کا سراغ لگا کر ملزمان ..
سرگودھا(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 19 اپریل2019ء) بھلوال پولیس نے آرمی ملازم کے اندھے قتل کی واردات کا سراغ لگا کر ملزمان کو گرفتار کر کے اسلحہ بھی برآمد کر لیا جن کے ایک سہولت کار ساتھی کی تلاش کے لئے چھاپے مارے جا رہے ہیں۔زرائع کے مطابق بھلوال پولیس نے آرمی ملازم کے اندھے قتل کا نہ صرف سراغ لگا لیا بلکے قاتلوں کو گرفتارکرکے اسلحہ بھی برآمد کرلیا۔

جنہوں نے اعتراف جرم کر لیا۔ 32 سالہ مقتول محمد ضیاء الرسول آرمی میں ملازم اور راولپنڈی کینٹ میں تعینات تھا جو وقوعہ کے روز اپنے بھائی کو ملنے بھلوال آیا اور 17 مارچ کو گھر سے راولپنڈی جانے کے لیے نکلا لیکن وہاں پر نہ پہنچا اسی دوران پولیس کو منی سٹیڈیم کے قریب ایک نعش ملی جس کی شناخت آرم ملازم محمد ضیاء الرسول کے نام سے ہوئی۔

(جاری ہے)

جسکو نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے قتل کیا تھا۔

جس پر درج مقدمہ کے مطابق مقتول کی کسی سے کوئی دشمنی نہ تھی جبکہ مدعی مقدمہ اور دیگر لواحقین نے بھی حقائق چھپائے رکھا۔ جسکی وجہ سے پولیس مقدمہ ٹریس کرنے میں مشکلات کا سامنا رہا لیکن بھلوال پولیس نے خصوصی ٹاسک پر کام کرتے ہوئے جدید طریقہ تفتیش رتو کالا کے محمد گلفام ولد مختار احمد قوم پڑھیار اور اشتیاق احمد ولد محمد خان قوم مسلم شیخ کو گرفتارکرلیا اورملزمان کے قبضہ سے اسلحہ بندوق12بور اور پسٹل30بور بھی برآمد کرکے الگ الگ مقدمات درج کرلیے گئے۔

مرکزی ملزم گلفام مقتول کی بیوی کا آشنا اور دودہ فروش بتلایا جا رہا ہے جو مقتول کو لڑکی بن کر فون کرتا رہا اور وقوعہ کے روز بھی اسی نے ملاقات کا جھانسہ دے کر بلوا یا اور ساتھی کے ہمراہ واردات کا ارتکاب کیا۔جو مقتول کی بیوی سے شادی کرنا چاہتا تھا مقتول نے بھی پسند کی شادی کر رکھی تھی۔ ابھی ایک سہولت کار ملزم کی تلاش جاری ہے۔