نالائق کپتان ہمیشہ نالائق ٹیم کا انتخاب کرتا ہے ، مریم اورنگزیب

بیٹنگ آرڈر کی تبدیلی کی بجائے نالائق کپتان کی تبدیلی پاکستان کے مفاد میں ہے ، قوم کو بتائیں کون آپ کی حکومت گرارہا ہے، آپ کی نالائقی، نا اہلی یا آپ کی زبان حکومت کو گرا رہی ہے،ترجمان مسلم لیگ (ن) ٴعمران صاحب! نوجوان نوکری نہیں دعا مانگ رہے ہیں آپ کی نوکری چلی جائے، پاکستان کے عوام جان چکے پاکستان ویسے ہی چل رہا ہے جیسے پشاور کی میٹروبس چل رہی ہے، نواز شریف نے کبھی نہیں کہا ملک چور ہے ملک کے پاس پیسے نہیں ، پاک-چین اقتصادی راہداری (سی پیک) کا تحفہ دے کر ملک کو نا قابلِ تسخیر بنایا،،گیارہ ہزار میگاواٹ بجلی بناکر عوام کو لوڈشیڈنگ کی اذیت سے نجات دلائی، 17 سو کلو میٹر موٹر ویز بنائیں اور ملک کو دہشت گردی سے پاک کیا، وفاقی کابینہ میں بڑے پیمانے پر ردوبدل میں شدیدتنقید

جمعہ اپریل 22:28

نالائق کپتان ہمیشہ نالائق ٹیم کا انتخاب کرتا ہے ، مریم اورنگزیب
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 19 اپریل2019ء) پاکستان مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے وفاقی کابینہ میں بڑے پیمانے پر ردو بدل پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ نالائق کپتان ہمیشہ نالائق ٹیم کا انتخاب کرتا ہے، بیٹنگ آرڈر کی تبدیلی کے بجائے نالائق کپتان کی تبدیلی پاکستان کے مفاد میں ہے۔مریم اورنگ زیب نے وزیراعظم عمران خان کے خطاب پر رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ عمران صاحب آپ بڑے پریشان تھے، اتنی گھبراہٹ اور اتنا غصہ کیوں ہے، آپ نے کہا کوئی آپ کی حکومت گرا رہاہے، قوم کو بتائیں کون آپ کی حکومت گرارہا ہے، آپ کی نالائقی، نا اہلی یا آپ کی زبان حکومت کو گرا رہی ہے کیونکہ اس حکومت کو گرانے کے لیے آپ کی نالائقی، نااہلی اور زبان ہی کافی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ابھی تو اپوزیشن نے باؤلنگ ہی نہیں کرائی لیکن آدھی ٹیم ہٹ وکٹ ہوچکی ہے، پاکستان کے مفاد میں بیٹنگ آرڈر نہیں بلکہ نالائق کپتان کی تبدیلی ہے۔

(جاری ہے)

ترجمان مسلم لیگ (ن) نے کہا کہ جب ٹیم کا کپتان ہی نالائق ہوتو ٹیم کیا کرے گی، نالائق کپتان ہمیشہ نالائق ٹیم کا چناؤ کرتا ہے۔وزیراعظم کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عمران خان صاحب اب شور کرنے سے بات نہیں بنے گی، آپ کی نالائقی کی وجہ سے پچھلے 9 ماہ سے عوام جس کرب سے گزر رہے ہیں اس پر آپ کو جواب دینا ہوگا۔

وفاقی کابینیہ میں ردوبدل کی جانب اشارہ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کابینہ میں ردوبدل کے بعد عثما بزدار ، شاہ فرمان اور محمود خان بھی گھبرانے والی فہرست میں شامل ہوگئے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ عمران صاحب! نوجوان نوکری نہیں بلکہ دعا مانگ رہے ہیں کہ آپ کی نوکری چلی جائے، پاکستان کے عوام جان چکے ہیں کہ پاکستان ویسے ہی چل رہا ہے جیسے پشاور کی میٹروبس چل رہی ہے، پیسوں سے کچھ نہیں ہوتا اگر ہوتا تو پشاور میں ایک کھرب سے میٹرو کے کھڈے نہ ہوتے۔

مریم اورنگ زیب نے اپنے دور حکومت کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ نواز شریف نے کبھی نہیں کہا کہ ملک چور ہے اور ملک کے پاس پیسے نہیں ، پاک-چین اقتصادی راہداری (سی پیک) کا تحفہ دے کر ملک کو نا قابلِ تسخیر بنای، نوجوانوں کو اٴْمید دی اور اللہ تعالیٰ کی مدد سے نا ممکن کو ممکن بنایا۔ان کا کہنا تھا کہ نوازشریف نے گیارہ ہزار میگاواٹ بجلی بناکر عوام کو لوڈشیڈنگ کی اذیت سے نجات دلائی، 17 سو کلو میٹر موٹر ویز بنائیں اور ملک کو دہشت گردی سے پاک کیا۔ترجمان مسلم لیگ (ن) کا کہنا تھا کہ کابینہ کا حجم بڑھانے سے نہیں نیت ٹھیک کرنے سے کارکردگی بہتر ہو گی۔