وزیر خزانہ اسد عمر کو ہٹاکر حکومت نے اپوزیشن کے موقف کو تسلیم کرلیا ہے،

اس بار خالص آئی ایم ایف کا بجٹ ہوگا ،خورشید شاہ عمران خان نے پوری قوم سے جھوٹ بولا اور فراڈ کیا ہے،چوہدری نثار کو لائیں گے تو سرور خان نہیں چل سکے گا، رہنما پیپلز پارٹی

ہفتہ اپریل 13:19

وزیر خزانہ اسد عمر کو ہٹاکر حکومت نے اپوزیشن کے موقف کو تسلیم کرلیا ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 20 اپریل2019ء) پاکستان پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما خورشید شاہ نے کہا ہے کہ وزیر خزانہ اسد عمر کو ہٹاکر حکومت نے اپوزیشن کے موقف کو تسلیم کرلیا ہے، اس بار خالص آئی ایم ایف کا بجٹ ہوگا ، عمران خان نے پوری قوم سے جھوٹ بولا اور فراڈ کیا ہے،چوہدری نثار کو لائیں گے تو سرور خان نہیں چل سکے گا۔

کابینہ میں تبدیلی کے معاملے پر خورشید شاہ نے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ عمران خان خطرناک گلی میں گھس رہا ہے۔ سید خورشید شاہ نے کہاکہ عمران خان کو سخت صورتحال کا سامنا کرنا پڑیگا۔ سید خورشید شاہ نے کہاکہ اسد عمر کا ہٹانا اپوزیشن کا موقف درست ہونے کا ثبوت ہے۔انہوںنے کہاکہ عمران خان نے آج تک پارلیمنٹ کو تسلیم ہی نہیں کیا۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ پارلیمنٹ کے نام پر عمران خان نے ووٹ لیکر عوام کو دھوکہ دیا ہے۔

صحافی نے سوال کیاکہ کیا حفیظ شیخ ڈلیور کر سکیں گے۔خورشید شاہ نے جواب دیا کہ موجودہ حالات کا چیلنج انہوں نے کیسے تسلیم کیا ہے، شاید وہ ڈلیور کرنے کی پوزیشن میں ہوں، اور بڑا مشکل ہے۔ انہوںنے کہاکہ عمران خان نے حفیظ شیخ کو لاکر پیپلزپارٹی کی پالیسی کو تسلیم کیا ہے۔انہوںنے کہاکہ غیر منتخب لوگوں کو کابینہ میں لانے سے منتخب لوگوں کو تکلیف ہوئی ہے۔

انہوںنے کہاکہ اس بار جو بجٹ آئے گا وہ خالص آئی ایم ایف کا ہوگا۔انہوںنے کہاکہ پہلے بھی آئی ایم ایف کے کہنے پر بجٹ بجٹ آتے رہے لیکن یہ بہت خطرناک ہوگا۔انہوںنے کہاکہ یہ تو ہوتا ہے کہ آپ بھیک مانگیں تو دینے والی کی بات مانیں۔انہوںنے کہاکہ اپوزیشن کے انفلیشن بڑھنے کی بات کو عالمی بنک نے بھی مانا ہے۔انہوںنے کہاکہ صدارتی باتوں پر مجھے کوئی سرپرائیز نہیں ہوا۔انہوںنے کہاکہ عمران خان نے پوری قوم سے جھوٹ بولا اور فراڈ کیا ہے۔انہوںنے کہاکہ چوہدری نثار کو لائیں گے تو سرور خان نہیں چل سکے گا۔انہوںنے کہاکہ چوہدری نثار کو بہت عرصے سے جانتا ہوں، وہ ن لیگ کے اندر رہ کر تحریک انصاف کی مدد کرنے کی گھٹیا حرکت نہیں کریں گے۔