بھارت میں ووٹر نےغلطی سے بی جے پی کو ووٹ ڈالنے پراپنی انگلی کاٹ لی

مودی کو ووٹ ڈال کر بہت بڑی غلطی کی، جس کے بعد سے مجھے چین نہیں آرہا اس لیے احساس جرم کے بوجھ کے باعث میں نے اپنی انگلی کاٹ لی۔ نوجوان ووٹر کا بیان

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان ہفتہ اپریل 13:17

بھارت میں ووٹر نےغلطی سے بی جے پی کو ووٹ ڈالنے پراپنی انگلی کاٹ لی
لکھنو(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - 20اپریل2019ء) بھارت میں عام انتخابات کے دوسرے مرحلے میں اتر پردیش کے ایک ووٹر نے بی جے پی کو ووٹ ڈالنے پر دل گرفتہ ہو کر اپنی سیاہی لگی انگلی کاٹ لی۔ عالمی میڈیا کے مطابق اترپردیش کے رہائشی پون کمار نے اپنے ویڈیو میں اعتراف کیا کہ اس نے مودی کی جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی کو ووٹ ڈال کر بہت بڑی غلطی کی ہے جس کے بعد سے مجھے چین نہیں آرہا ہے اس لیے احساس جرم کے بوجھ کے باعث اپنی وہ انگلی کاٹ لی ہے جس پر ووٹ دینے کے بعد سیاہی لگائی جاتی ہے۔

پون کمار کا کہنا تھا کہ وہ ایک علاقائی سیاسی جماعت کو ووٹ دینا چاہتا تھا مگر ووٹنگ مشین میں بہت سے انتخابی نشان دیکھ کر پریشان ہو گیا اور غلطی سے ہاتھی کے بجائے پھول والے بٹن کو دبا دیا۔ ہاتھی علاقائی جماعت کا انتخابی نشان تھا جب کہ پھول بی جے پی کا نشان ہے۔

(جاری ہے)

واضح رہے بھارت میں پارلیمانی انتخابات کیلئے تیسرے مرحلے میں 23 اپریل کو 115 حلقوں میں ووٹ ڈالے جائیں گے۔

جمعہ کو بھارتی ذرائع ابلاغ کے مطابق لوک سبھا الیکشن کے تیسرے مرحلے میں 14ریاستوں میں رائے دہندگان اپنے نمائندوں کا چنائو کریں گے۔ بھارتی پارلیمنٹ کے ایوان زیریں لوک سبھا انتخابات کے آخری اور ساتویں مرحلے کیلئے 7 مئی کو ملک کی 19 ریاستوں کی 59 نششتوں پر ووٹڈالیں جائیںگے۔ اس سے قبل لوک سبھا الیکشن کے دوسرے مرحلے میں 11ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام ایک ریاست میں 95 لوک سبھا سیٹوں پر ووٹ ڈالے گئے تھے۔

بھارت کے ڈپٹی الیکشن کمشنر امیش سنہا نے صحافیوں کو بتایا کہ تشدد کے بعض چھوٹے موٹے واقعات کو چھوڑکر دوسرے مرحلے کی پولنگ پرامن رہی۔ ریاست مغربی بنگال میں 76.43 فیصد پولنگ ہوئی۔ ریاست منی پور میں 76.15 فیصد اور آسام میں 76.22 فیصد رائے دہندگان نے ووٹ ڈالے۔ پانڈی چیر ی میں 76.19 فیصد، چھتیس گڑھ میں 71.40 فیصد، کرناٹک میں 67.76 فیصد، تامل ناڈومیں 72فیصد، اڑیسہ میں 57.97 فیصد، بہار میں 62.38 فیصد، اترپردیش میں 62.06 فیصد اور مہاراشٹر میں 61.22 فیصد رائے دہندگان نے اپنے حق رائے دہی کا استعمال کیا۔اڑیسہ میں میں لوک سبھا کی پانچ سیٹوں کے ساتھ ہی اسمبلی کی 35 فیصد سیٹوں پربھی ووٹ ڈالے گئے۔