استنبول کے نئے میئر نے ایردوآن کے دور کی تحقیقات شروع کر دیں

اکرم امام اولو نے 18 اپریل کو بلدیہ کی کمپنیوں کو بھیجے گئے ایک خط میں بہت سی معلومات اور دستاویزات طلب کی ہیں، ان میں بینک ریکارڈ بھی شامل ہے

ہفتہ اپریل 19:45

استنبول کے نئے میئر نے ایردوآن کے دور کی تحقیقات شروع کر دیں
ش* استنبول(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 20 اپریل2019ء) ترکی کے شہر استنبول میں متنازع بلدیاتی انتخابات کے دو ہفتوں بعد سرکاری طور پر اپوزیشن امیدوار اکرم امام اولو کی بطور میئر انتخابات میں کامیابی کا اعلان کر دیا گیا۔ اعلان کے بعد اولو نے بلدیہ کی عمارت کے سامنے اپنے حامیوں اور سپورٹروں کے ساتھ جیت کا جشن منایا۔اس سلسلے میں"انڈیپینڈنٹ ترکی" نے انکشاف کیا ہے کہ اولو نے میئر کی ذمے داریاں سنبھالنے کے بعد بلدیہ کی تفتیشی کمیٹی کے دو تفتیش کاروں اور تین ماہرین کو اختیارات دے کر یہ ذمے داری سونپی ہے کہ وہ بلدیہ کے الیکٹرونک ڈیٹا بینک کا تفصیلی اور باریک بینی کے ساتھ آڈٹ کریں۔

تفتیشی مہم محض ڈیٹا بینک کے آڈٹ تک محدود نہیں بلکہ مذکورہ اخبار کو حاصل ہونے والی دستاویزات کے مطابق اکرم امام اولو نے 18 اپریل کو بلدیہ کی کمپنیوں کو بھیجے گئے ایک خط میں بہت سی معلومات اور دستاویزات طلب کی ہیں، ان میں بینک ریکارڈ بھی شامل ہے۔

(جاری ہے)

علاوہ ازیں امام اولو نے بلدیہ میں اراضی کے اندراج کے شعبے میں درج غیر منقولہ املاک کی فہرست ، بلدیہ کے نام پر درج گاڑیوں کی فہرست، ان گاڑیوں کو استعمال کرنے والے افراد کے ناموں کی فہرست، بلدیہ کے دفتر میں موجود کمپیوٹرز، لیپ ٹاپس، موبائل فونز اور ان کو استعمال میں لانے والے افراد کی تفصیلات، بلدیہ کے مستقل اور ریٹائرڈ ملازمین کی تفصیلات کے علاوہ بلدیاتی انتخابات کے دن 31 مارچ سے لے کر مذکورہ خط بھیجے جانے کے روز یعنی 18 اپریل کے درمیان بینک میں بلدیہ کے اثاثوں کی تفصیلات بھی طلب کی ہیں۔

استنبول کے نئے میئر نے تمام مالیاتی دستاویزات کی تصدیق شدہ کاپیاں بھی طلب کی ہیں