سری لنکن حکومت نے حالیہ دہشتگردانہ حملوں میں سیکیورٹی فورسز کی ناکامی پست پشت ڈال دی

مسلمانوں خواتین کے برقع پہننے پر پابندی لگانے کا پروگرام بنالیا، حملوں کے دوران متعدد خواتین کے برقع پہن کر فرار ہونے کا الزام

بدھ اپریل 20:43

سری لنکن حکومت نے حالیہ دہشتگردانہ حملوں میں سیکیورٹی فورسز کی ناکامی ..
کولمبو(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 24 اپریل2019ء) سری لنکن حکومت نے حالیہ دہشتگردانہ حملوں میں اپنی سیکیورٹی فورسز کی ناکامی پس پشت ڈال کر مسلمانوں خواتین کے برقع پہننے پر پابندی لگانے کا پروگرام بنالیا ۔

(جاری ہے)

سری لنکن حکومت کے ذرائع کا کہنا ہے کہ حکام مسلم کمیونٹی کے رہنمائوں سے مشاورت کرکے برقع پر پابندی عائد کرنے پر غور کررہی ہے جبکہ ابھی اس معاملے پر صدر ممیتھریپالا کے ساتھ بات چیت ہورہی ہے رپورٹ کے مطابق ذرائع کا کہنا ہے کہ حالیہ دہشتگردانہ حملے میں ملوث متعدد خواتین برقع کا فائدہ اٹھا کر فرار ہوگئیں دریں اثناء حکمران یونائیٹڈ نیشنل پارٹی کے رکن پارلیمنٹ نے بھی ایوان میں برقع پر پابندی کیلئے ایک قرارداد پیش کی ہے انہوں نے کہا کہ برقع پر پابندی ملک کی بین الاقوامی سکیورٹی ضروریات کو بنیاد بنا کر عائد کی جائے گی

متعلقہ عنوان :