لاہور ہائیکورٹ سابق چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کے داماد مرتضی امجد کو اشتہاری قرار دینے کا احتساب عدالت کا حکم کالعدم قرار دے دیا

بدھ اپریل 21:54

لاہور ہائیکورٹ سابق چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کے داماد مرتضی امجد ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 24 اپریل2019ء) لاہور ہائیکورٹ سابق چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کے داماد مرتضی امجد کو اشتہاری قرار دینے کا احتساب عدالت کا حکم کالعدم قرار دے دیا۔

(جاری ہے)

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس ملک شہزاد کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے افرہ مرتضیٰ کی درخواست پر سماعت کی،افراء مرتضیٰ کی جانب سے اسد منظور بٹ ایڈووکیٹ نے دلائل دیے،انہوں نے کہاچیئرمین نیب نے مرتضی امجد کیخلاف کسی ریفرنس کی منظوری نہیں دی،احتساب عدالت نے غیر قانونی طورپرایڈن سکینڈل کے الزام میں مرتضیٰ امجد کو اشتہاری قرار دیا،مرتضیٰ امجد کوانٹرپول کے ذریعے دبئی میں غیر قانونی طور پرتحویل میں لیا گی،احتساب عدالت نے محض نیب کی ایک درخواست پر غیر قانونی طور پروارنٹ گرفتاری جاری کئے،نیب پراسیکیوٹرنے کہ درخواست گزار متاثرہ فریق نہیں ہے، عدالت نے استفسار کیا مرتضی کو اشتہاری قرار دینے کیلئے کیا کارروائی کی، بتایا جائے اس سے متعلق کوئی شواہد ریکارڈ پر موجود ہیں،عدالت نے مرتضی امجد کو اشتہاری قرار دینے کا احتساب عدالت کا حکم کالعدم قرار دے دیا۔