دُبئی ٹرام میں کچھ خلاف ورزیوں پر 30 ہزار درہم کا بھاری جرمانہ ہو سکتا ہے

روڈز اینڈ ٹرانسپورٹ اتھارٹی کی جانب سے راہگیروں اور ڈرائیورز کے لیے ہدایات جاری کر دی گئیں

Muhammad Irfan محمد عرفان جمعرات اپریل 11:11

دُبئی ٹرام میں کچھ خلاف ورزیوں پر 30 ہزار درہم کا بھاری جرمانہ ہو سکتا ..
دُبئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین،25 اپریل 2019) دُبئی روڈز اینڈ ٹرانسپورٹ اتھارٹی کی جانب سے ڈرائیورز اور راہگیروں کے لیے ایک آگاہی مہم شروع کی گئی ہے، جس میں بتایا گیا ہے ٹرام زون میں داخل ہوتے وقت کن قواعد و ضوابط کا خیال رکھنا ضروری ہے۔ اس آگاہی مہم کا مقصد عوام کو ٹرام کے ساتھ حادثات سے محفوظ رکھنا ہے اور پبلک پراپرٹی کا تحفظ یقینی بنانا ہے۔

اگر کوئی شخص ان ہدایت اور قواعد کا خیال نہیں رکھے گا تو اسے 30ہزار درہم تک کے بھاری جرمانے کی سزا سُنائی جا سکتی ہے۔ اس حوالے سے جاری کردہ ہدایات مندرجہ ذیل ہیں:
1۔ ”ٹرام زون میں داخل نہ ہوں۔“ اس ہدایت کا مطلب عوام کو ٹرام کے لیے مخصوص ایریا سے پرے رکھنا ہے۔
2۔ ”سڑک کراس کرنے سے پہلے دائیں جانب دیکھیں“ اس کا مطلب ہے کہ یہاں پر ٹرام دائیں جانب سے آ سکتی ہے۔

(جاری ہے)


3۔ ”سڑک کراس کرنے سے پہلے بائیں جانب دیکھیں“۔ اس ہدایت کا مطلب راہگیروں اور ڈرائیورز کو بائیں جانب سے ٹرام کی آمد کے بارے میں آگاہی دینا ہے۔
4۔ ”سڑک کراس کرنے سے پہلے دائیں اور بائیں دیکھ لیں۔“ اس ہدایت سے مراد یہ ہے کہ یہاں پر ٹرام دونوں جانب سے آ سکتی ہے۔
5۔ ”اپنی نظریں سامنے سڑک پر رکھیں“ اس کا مطلب یہ ہے کہ سامنے سڑک پر ٹرام دائیں جانب سے بائیں جانب کو آ سکتی ہے یا بائیں جانب سے دائیں جانب کو آ سکتی ہے۔

اس لیے ہوشیار رہیں۔
6۔ ”ٹریفک سگنل کی پابندی کریں“ اگر اشارہ سُرخ ہے تو اس کا مطلب ہے کہ ٹرین ہمارے دائیں جانب سے آ رہی ہے۔ لہٰذا راہگیر اور ڈرائیورز سڑک عبور کرنے کی غلطی نہ کریں۔
7۔ ”ٹریفک سگنل کی پابندی کریں“ اگر اشارہ سُرخ ہے تو اس کا مطلب ہے کہ ٹرین ہمارے بائیں جانب سے آ رہی ہے۔ لہٰذا راہگیر اور ڈرائیورز سڑک عبور کرنے کی غلطی نہ کریں۔

متعلقہ عنوان :