وزیراعظم عمران خان الیکشن جیتنے کی نہیں بلکہ نئی نسل کے مستقبل کو روشن بنانے کی بات کرتے ہیں، زرتاج گل

جمعرات اپریل 18:35

وزیراعظم عمران خان الیکشن جیتنے کی نہیں بلکہ نئی نسل کے مستقبل کو روشن ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 25 اپریل2019ء) وزیر مملکت برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان الیکشن جیتنے کی نہیں بلکہ نئی نسل کے مستقبل کو روشن بنانے کی بات کرتے ہیں، جب تک میڈیا آن بورڈ نہ ہو کسی منصوبہ میں کامیابی ممکن نہیں، ملک کو سرحدوں سے زیادہ خطرہ موسمیاتی تبدیلی سے ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کے روز قومی ادارہ برائے تحفظ ماحول (ای پی ای) کے زیر اہتمام ’’ماحولیاتی اور موسمیاتی تبدیلی میں میڈیا کا کردار‘‘ کے موضوع پر منعقدہ سمینار سے خطاب کرتے ہوئے۔

زرتاج گل نے کہا کہ جدید دور میں میڈیا کا کردار نہایت اہم ہوچکا ہے، انہوں نے کہا کہ کوئی بھی منصوبہ اس وقت تک احسن طریقے سے پایہ تکمیل تک نہیں پہنچایا جا سکتا جب تک میڈیا آن بورڈ نہ ہو۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلیوں سے پاکستان بری طرح متاثر ہورہا ہے ہم سب کو ملکر اقداما ت کرنے ہیں جس میں عوام کا تعاون نہایت اہمیت رکھتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ملک کو سرحدوں سے زیادہ خطرہ موسمیاتی تبدیلی سے ہے کیونکہ اس دور میں موسمیاتی تبدیلی ایک بڑا مسئلہ بن چکی ہے، شدید بارش ،سیلاب، خشک ساحلی اور دیگر آفات سے زراعت کا شعبہ بری طرح متاثر ہو رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان ایک دور اندیش لیڈر ہیں جو الیکشن جیتنے کی بجائے نئی نسلوں کا مستقبل روشن کرنے کی بات کرتا ہے اور وہ قوم کو مایوس نہیں کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری وزارت نے چھ ماہ کے اندر نہایت اہم اہداف حاصل کئے ہیں اور ہم وزیر اعظم کے کلین اینڈ گرین پاکستان منصوبہ، سالڈ ویسٹ مینجمنٹ، پینے کاصاف پانی اور دیگر منصوبوں پر کام کر رہے ہیں۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے وفاقی سیکرٹری وزارت موسمیات حسن ناصر جامی نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلی سے متاثر ہونے والے ممالک میں پاکستان 7ویں یا 8ویں نمبر پرہے جو قابل تشویش بات ہے جبکہ ہمارے لئے یہ حوصلہ افزاء بات ہے کہ پاکستان دنیا میں ماحول کو خراب کرنے والے ممالک میں شامل نہیں اس کی بنیادی وجہ یہ ہے ہمارے ہاں انڈسٹری کا شعبہ ماحولیاتی آلودگی پھیلانے والے ممالک سے کم ہے۔

انہوں نے کہا کہ پلاسٹک کے شاپنگ بیگز کے استعمال پر کنٹرول حاصل کرنے کے لیے عوام میں آگاہی پیدا کی جارہی ہے تاکہ وہ اس کا استعمال ترک کر کے کپڑے کے بیگ استعمال کریں۔انہوں نے کہا کہ ہنزہ کے عوام نے لوگوں نے پلاسٹک کے بیگ کا استعمال ترک کر کے کپڑے کے بیگز کا استعمال شروع کردیا ہے۔ اس موقع پر ای پی اے کی ڈی جی فرزانہ الطاف نے کہا کہ ہم پلاسٹک کے خاتمے کے لیے قانون لا رہے ہیں جس کے بعد جو پلاسٹک کے شاپنگ بیگز کا جو استعمال کرے گا اس پر جرمانہ ہوگا۔انہوں نے کہا کہ اس مہم کو کامیاب بنانے کے لئے مڈیا ہمارا ساتھ دے۔ سیمینار کے اختتام پر شریک رپورٹز سرٹیفیکٹ تقسیم کئے گئے۔