صدر مملکت کی منظوری سے حسین اصغر تین سال کیلئے ڈپٹی چیئرمین نیب تعینات ،نوٹیفکیشن جاری

چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے ڈپٹی چیئرمین کی سیٹ پر تقرری کرنے کی سفارش کی تھی

جمعرات اپریل 18:55

صدر مملکت کی منظوری سے حسین اصغر تین سال کیلئے ڈپٹی چیئرمین نیب تعینات ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 25 اپریل2019ء) صدر مملکت عارف علوی کی منظوری سے حسین اصغرکو تین سال کے لئے ڈپٹی چیئرمین قومی احتساب بیورو (نیب )تعینات کردیا گیا۔چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے ڈپٹی چیئرمین کی سیٹ پر تقرری کرنے کی سفارش کی تھی جس پر صدر مملکت عارف علوی نے چیئرمین نیب سے مشاورت کر کے حسین اصغرکی تعیناتی کی منظوری دیدی۔

اس ضمن میں وزارت قانون اور انصاف کی طرف سے حسین اصغر کی تعیناتی کا باضابطہ نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے ۔حسین اصغرکا تعلق پولیس گروپ سے ہے اور وہ گریڈ 22میں ریٹائرڈ ہوئے، حسین اصغر دوران ملازمت ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب اور آئی جی گلگت بلتستان کی حیثیت سے بھی کام کرچکے ہیں۔حسین اصغر نے وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے )میں بھی خدمات انجام دیں اورپیپلز پارٹی کے دور حکومت میں حج کرپشن کیس کو بھی منطقی انجام تک پہنچایا، وہ اچھی شہرت کے حامل افسر سمجھے جاتے ہیں۔

(جاری ہے)

یاد رہے چند روز قبل قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جاوید اقبال نے نیب کراچی کے ڈپٹی ڈائریکٹر محمد ندیم ساجد کو تین ماہ کے لیے معطل کر دیا تھا، انہیں فرائض سے غفلت برتنے پر معطل کیا گیا۔نیب چیئرمین جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ نیب میرٹ، شواہد، احتساب سب کے لیے کی پالیسی پر عمل کر رہی ہے، بد عنوانی تمام برائیوں کی جڑ ہے۔