چین نے 90پاکستانی دلہنوں کے ویزے روک دیے

چین میں پاکستان سے بیاہ کر جانے والی لڑکیوں کے ساتھ ناروا سلوک اور فراڈ کے حوالے سے خبریں سامنے آنے کے بعد چین نے پاکستانی دلہنوں کے ویزے روک دیے ہیں

Usman Khadim Kamboh عثمان خادم کمبوہ جمعرات مئی 00:24

چین نے 90پاکستانی دلہنوں کے ویزے روک دیے
بیجنگ(اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین۔15مئی2019ء) چین میں پاکستان سے بیاہ کر جانے والی لڑکیوں کے ساتھ ناروا سلوک اور فراڈ کے حوالے سے خبریں سامنے آنے کے بعد چین نے پاکستانی دلہنوں کے ویزے روک دیے ہیں۔تفصیلات کے مطابق پاکستانی لڑکیوں کو بیاہ کر چین لیجانے اور وہاں ان کے ساتھ ناروا سلوک کی خبریں سامنے آنے کے بعد چین نے 90پاکستانی دلہنوں کے ویزے روک لیے ہیں۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق گزشتہ دنوں یہ سنگین معاملہ سامنے آیا ہے کہ چینی باشندوں کے منظم گروہ پاکستانی لڑکیوں کو ورغلا کر اور ان کے والدین کو پیسوں کا لالچ دے کر پاکستانی لڑکیوں کو شادی کر کے چین لے جاتے ہیں جو کہ داراصل انسانی سمگلنگ ہوتی ہے اور ایسی خبریں بھی سامنے آئی ہیں کہ ان لڑکیوں کو چین لے جا کر ان کے جسمانی اعضاء نکال کر بلیک مارکیٹ میں فروخت کردیے جاتے ہیں۔

(جاری ہے)

ذرائع کے مطابق چینی سفارتخانے کو رواں سال اب تک 140چینی شہریوں کی جانب سے درخواستیں موصول ہوچکی ہیں جو کہ پاکستانی دلہنوں کے ویزے حاصل کرنا چاہتے ہیں۔ یہ تعداد گزشتہ سال کی نسبت بہت زیادہ ہے۔ پاکستانی حکام نے شکایات سامنے آنے پر چینی حکام سے رابطہ کیا ہے جس پر چینی حکام نے پاکستان کو اس معاملے کی تحقیقات کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے۔ گزشتہ روز چینی سفارتخانے کے ڈپٹی چیف آف مشن لی جیان ڑآ نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا ہے کہ درخواست دینے والے 140میں سے صرف 50چینی شہریوں کو ان کی پاکستانی دلہنوں کے ویزے جاری کیے گئے ہیں اور باقی 90دلہنوں کے ویزے روک لیے گئے ہیں۔

متعلقہ عنوان :