Live Updates

مسلمانوں کی حمایت کرنے والے بھارتی سابق جسٹس کو شاہد آفریدی پرتنقید مہنگی پڑ گئی

آفریدی قران مجید کی تعلیم کو صحیح طرح سمجھ ہی نہیں سکے، مسلمان آفریدی کے بیان کی مذمت کریں،جسٹس مرکنڈے کے بیان پر مسلمانوں کا شدید ردِ عمل

Usman Khadim Kamboh عثمان خادم کمبوہ پیر مئی 23:47

مسلمانوں کی حمایت کرنے والے بھارتی سابق جسٹس کو شاہد آفریدی پرتنقید ..
نئی دہلی(اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین۔20مئی2019) مسلمانوں کی حمایت کرنے والے بھارتی سپریم کورٹ کے سابق جج مرکنڈے کٹجو نے پاکستانی کرکٹ سٹار شاہد آفریدی پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ اافریدی قرآن مجید کی تعلیمات کو صحیح طرح سمجھ ہی نہیں سکے۔مرکنڈے کٹجو نے کہا ہے کہ تمام لوگ خاص طور پہ پاکستانی مسلمان آفریدی کی مذمت کریں۔ یاد رہے کہ شاہد آفریدی نے ایک سوال کے جواب میں کہا تھا کہ وہ اپنی بیٹیوں کو گھر سے باہر کھیلنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

جسٹس مرکنڈے نے کہا کہ ایسی سوچ جابرانہ اور جاہلانہ ہے۔ جسٹس مرکنڈے نے ان خیالات کا اظہار اپنے ٹویٹر اور فیس بک پیغامات میں کیا تھا۔
ان بیانات کے بعد مسلمانوں نے ان پر شدید تنقید کرنا شروع کر دی ہے۔

(جاری ہے)

مسلمانوں کا کہنا ہے کہ یہ بیانات اسلام مخالف ہیں اور اسلام کی تہذیب کے منافی ہیں۔ جسٹس مرکنڈے نے بتایا ہے کہ ان کے ان بیانات کے بعد مسلمانوں نے ان پر شدید تنقید شروع کر دی ہے اور کچھ لوگوں نے تو انہیں ان کے خاندان کی خواتین کے حوالے سے دھمکیاں بھی دی ہیں، جسٹس مرکنڈے نے بتایا کہ بعض لوگوں نے فیس بک انہین شدید گالیاں بھی دیں جس پر انہیں کچھ تبصرے مٹانے بھی پڑے۔

یاد رہے کہ جسٹس مرکنڈے بھارتی شپریم کورٹ کے جج رہے ہیں اور وہ ایک ہندو ہونے کے باوجود مسلمانوں کے حق میں بولتے رہتے ہیں، اس کے علاوہ وہ ہندوؤں کی بہت سی رسومات اور عقائد کے بھی خلاف ہیں۔ جسٹس مرکنڈے ہندوؤں کی جانب سے گائے کو ماں کہنے اور اس کو مقدس ماننے کے حوالے سے بھی تنقید کر چکے ہیں اور بھارت میں مسلمانوں کے حقوق کے لیے بھی آواز اٹھاتے رہے ہیں جس کی وجہ سے انہیں انتہا پسند ہندوؤں کی جانب سے دھمکیاں بھی ملتی رہتی ہیں۔ 
کرکٹ ورلڈکپ 2019 سے متعلق تازہ ترین معلومات