حساس ادارے کے سربراہ کے گھر میں ڈاکو گھس گئے

جب ڈاکوؤں کو علم ہوا کہ یہ گھر آرمی افسر کا ہے تو بغیر چوری کیے معافی مانگ کر واپس چلے گئے

Kamran Haider کامران حیدر اتوار جون 21:25

حساس ادارے کے سربراہ کے گھر میں ڈاکو گھس گئے
راولپنڈی (اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 جون 2019ء) حساس ادارے کے سربراہ کے گھر میں ڈاکو گھس گئے۔ جب ڈاکوؤں کو علم ہوا کہ یہ گھر آرمی افسر کا ہے تو بغیر چوری کیے معافی مانگ کر واپس چلے گئے۔ تفصیلات کے مطابق حساس ادارے کے سربراہ کے گھر میں گھسنے والے 4 ڈاکو بغیر چوری کیے وہاں سے چلتے بنے، دوران کارروائی جب ڈاکوؤں کو علم ہوا کہ وہ جس گھر میں چوری کرنے کی غرض سے گھس آئے ہیں وہ ایک آرمی افسر کا گھر ہے تو انہوں نے فوراََ اپنے ساتھیوں کو واپس بلاتے ہوئے وہاں سے نکلنے کا کہا اور جاتے جاتے آرمی افسر کی فیملی سے معذرت بھی کر کے گئے۔

پولیس ذرائع کے مطابق لیفٹیننٹ کرنل لیاقت علی سکنہ ڈی ایچ اے فیز ون نے پولیس کو بتایا کہ وہ ڈیوٹی پر تھے اور انہیں گھر سے فون آیا کہ گھر میں ڈاکو گھس آئے ہیں، ان کا کہنا تھا کہ میں گھر پہنچا تومیرے بیٹے محمد علی اورعبدالرافع نے بتایا کہ دروازہ پر رنگ بجی اور میرے بیٹے محمد علی نے دروازہ کھولا تو دیکھتے ہی دیکھتے 4 نامعلوم مسلح ملزمان زبردستی گھر میں داخل ہو گئے جنہوں نے اسلحے کے زور پر میری فیملی کو ایک جگہ اکٹھا کیا اور کارروائی شروع کر دی۔

(جاری ہے)

لیفٹیننٹ کرنل لیاقت علی کا کہنا تھا کہ چور کمروں کی تلاشی لیتے رہے، اسی دوران ان کو معلوم ہوا کہ یہ گھر ایک آرمی افسر کا ہے تو انہوں نے فوراََ اپنے ساتھیوں کو واپس بلوا لیا اور میری فیملی سے معافی مانگتے ہوئے واپس چلے گئے۔ لیفٹیننٹ کا مزید کہنا تھا کہ ان کا کسی قسم کا کوئی نقصان نہیں ہوا اور ڈاکو جاتے جاتے میرے بیٹے کا بٹوا بھی واپس کر گئے جو انہوں نے چھین لیا تھا۔ واضح رہے کہ پولیس واقعے کی چھان بین کر رہی ہے اور ابتدائی تحقیقات کے مطابق ملزمان کی گاڑی کا نمبر ٹریس کر لیا گیا ہے جو کہ (ایل ای ایچ  4471) ہے۔

متعلقہ عنوان :