اسلام آباد ہائی کورٹ نے العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کی طبی بنیادوں پر سزا معطلی کی درخواست پر سماعت(کل) تک ملتوی کر دی

بدھ جون 23:30

اسلام آباد ہائی کورٹ نے العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کی طبی بنیادوں ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 19 جون2019ء) اسلام آباد ہائی کورٹ نے العزیزیہ ریفرنس میں سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف کی طبی بنیادوں پر سزا معطلی کی درخواست پر سماعت( کل )جمعرات تک ملتوی کر دی۔ عدالت نے ضمانت منظوری کیلئے سابق وزیراعظم کی اضافی دستاویزات جمع کرانے کی درخواست منظور کرلی۔ بدھ کو جسٹس عامرفاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی پر مشتمل 2 رکنی بینچ نے نواز شریف کی طبی بنیادوں پر درخواست ضمانت اور مرکزی اپیل پر سماعت کی۔

(جاری ہے)

نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ غیر ملکی ڈاکٹرز اور سرجنز کی میڈیکل رپورٹ بھی جمع کرانے کی اجازت دی جائے،ڈاکٹروں کے مطابق نواز شریف کو جس علاج کی ضرورت ہے وہ پاکستان میں ممکن نہیں۔ خواجہ حارث نے کہا کہ طبی بنیادوں پر ضمانت کا کیس میرٹ پرضمانت سے مختلف ہے، جس کی عدالتی نظیر موجود ہیں۔ڈائریکٹر جنرل نیب راولپنڈی عرفان منگی نے عدالت میں پیش ہوکر یقین دہانی کرائی کہ آئندہ نیب کی جانب سے ضمانت کی درخواستوں پر جواب جمع کرانے میں تاخیر نہیں ہو گی۔عدالت نے طبی بنیادوں پر نواز شریف کی ضمانت کی درخواست پر سماعت (آج )جمعرات تک جبکہ مرکزی اپیل پرسماعت 27 جون تک ملتوی کر دی۔