کرپشن اور منی لانڈرنگ کرنے والوں کو پہلے گاڑی کے پہیوں کے ساتھ چوراہوں میں گھمایا جائے پھر پھانسی دی جائے ، فیصل واوڈا

منگل جون 22:09

کرپشن اور منی لانڈرنگ کرنے والوں کو پہلے گاڑی کے پہیوں کے ساتھ چوراہوں ..
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 25 جون2019ء) وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا نے کہا ہے کہ کرپشن اور منی لانڈرنگ کرنے والوں کو پہلے گاڑی کے پہیوں کے ساتھ چوراہوں میں گھمایا جائے پھر انہیں پھانسی دے دی جائے۔قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے فیصل واوڈا نے کہا کہ ملکی خزانہ لوٹنے والے 5 ہزار آدمیوں کو لٹکانے کی بات پر قائم ہوں حالانکہ میں نے یہ بات قانون کی حکمرانی قائم کرنے کیلئے کہی تاکہ پاکستان کی تقدیر بدل جائے لیکن اس بیان پر مجھے فاشسٹ کہا گیا، جن لوگوں نے مجھے فاشٹ کہا ہے وہ کیا سانحہ ماڈل ٹاؤن بھول گئے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ 78 کروڑ روپے جاتی عمرہ کی دیواروں اور سیکورٹی پر خرچ کیے گئے، ملکی خزانے سے 28 کروڑ روپے اپنے ذاتی علاج پر خرچ کیے، 24 کروڑ روپے سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کے خرچ میں لکھے گئے جبکہ وزیراعلیٰ کیلئے حکومت کا جہاز موجود تھا، جو غلط ہوگا اس پر زمین و آسمان ایک کردیا جائے گا مگر سیاسی تعصب اور مخالفت کی وجہ سے کوئی کیس غلط نہیں بنایا جائے گا۔

(جاری ہے)

فیصل واوڈا نے کہا کہ میں نے کراچی میں شہباز شریف کو شکست دی ، میری جیت کو شہبازشریف کے جعلی دستخط سے چیلنج کیا گیا، میں شہباز شریف کو چیلنج کرتا ہوں کہ وہ ری کاؤنٹنگ کروالیں اگر میری شکست ہوئی تو میں وزارت کے ساتھ ساتھ اسمبلی رکنیت سے مستعفی ہوجاؤں گا لیکن شہباز شریف کی شکست کی صورت میں وہ بھی اسمبلی رکنیت سے استعفیٰ دیں۔