ورلڈ کپ ،عمران خان کی نیوزی لینڈ کے خلاف جیت پر قومی ٹیم کو مبارکباد

شاندار کارکردگی پر بابر اعظم، حارث سہیل اور شاہین کو خصوصی مبارک: وزیر اعظم

Zeeshan Mehtab ذیشان مہتاب جمعرات جون 00:19

ورلڈ کپ ،عمران خان کی نیوزی لینڈ کے خلاف جیت پر قومی ٹیم کو مبارکباد
برمنگھم(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔26جون2019ء) وزیر اعظم عمران خان نے قومی ٹیم کو نیوزی لینڈ کے خلاف شاندار کاکردگی پر مبارکباد دی ہے ۔ سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں عمران خان کا کہنا تھا کہ ” زبردست کم بیک پر قومی کرکٹ ٹیم کو دلی مبارکباد۔ شاندار کارکردگی پر بابر اعظم، حارث سہیل اور شاہین کو خصوصی مبارک“۔
یاد رہے کہ آئی سی سی ورلڈکپ کے 33ویں میچ میں پاکستان نے سنسنی خیز مقابلے کے بعد نیوزی لینڈ کو 6وکٹوں سے شکست دیکر اپنی سیمی فائنل کھیلنے کی امیدیں مزید بڑھا لیں ۔

کیویز کے 238رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستان کے لیے فخر زمان اور امام الحق پر مشتمل گرین شرٹس نے اننگز کا آغاز کیا تو تیسرے ہی اوور میں 19 رنز پر فخرزمان کیچ آﺅٹ ہوگئے، انہوں نے 2 چوکوں کی مدد سے 9 رنز بنائے جب کہ 44 کے مجموعے پر امام الحق بھی چلتے بنے، وہ 19 رنز بنا سکے۔

(جاری ہے)

نئے آنے والے بیٹسمین محمد حفیظ اور بابراعظم نے تیسری وکٹ کی شراکت میں قیمتی 66 رنز جوڑ کر ٹیم کی پوزیشن کو مستحکم کیا تاہم جب مجموعی سکور 110 پر پہنچا تو محمد حفیظ 32 رنز بناکر بابر اعظم کا ساتھ چھوڑ گئے۔

حارث سہیل انہوں نے بابر اعظم کے ساتھ 147گیندوں پر126رنز کی میچ وننگ شراکت قائم کی،وہ 68رنز 76گیندوں پر بناکر رن آﺅٹ ہوئے۔بابر اعظم نے دسویں ون ڈے سنچری 124گیندوں پر مکمل کی جس میں گیارہ چوکے شامل تھے۔سرفراز احمد نے چوکا مارکر وننگ سٹروک کھیلا۔ورلڈ کپ میں پاکستان کے7میچوں کے بعد7 پوائنٹس ہوگئے ہیں،پاکستان کو ہفتے کو افغانستان اور اس کے بعد بنگلہ دیش کے خلاف میچ کھیلنا ہیں۔

انگلینڈ کو بھارت اورنیوزی لینڈ کے خلاف دو میچ کھیلنا ہیں اور انگلینڈ کو کم ازکم ایک میچ ہارکر پاکستان کےلئے راہ ہموار کرنا ہے۔پاکستان نے جنوبی افریقا کے بعد نیوزی لینڈ کو شکست دی۔ورلڈ کپ میں پاکستان نے ابتک سات میچ کھیلے ہیں، تین جیتے، تین میں اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا، جبکہ ایک میچ بارش کی نذر ہوا، اس طرح پاکستان کے پانچ پوائنٹس ہیں۔

اس شکست کے بعد نیوزی لینڈ کو سیمی فائنل میں جگہ پکی کرنے کے لئے ایک میچ اور جیتنا ہے۔اسے آسٹریلیا اور انگلینڈ سے بقیہ دو میچ کھیلنا ہیں۔اس سے قبل ایجبسٹن گراﺅنڈ،برمنگھم میں کھیلا جارہا میچ ایک گھنٹے تاخیر سے شروع ہوا تو مارٹن گپٹل اور کولن منرو نے اننگز کا آغاز کیا۔میچ کے دوسرے اوور کی پہلی ہی گیند پر مارٹن گپٹل محمد عامر کا شکار بن گئے، وہ صرف 5 رنز بناسکے،کولن منرو بھی 12رنز بناکر شاہین آفریدی کی گیند پر حارث سہیل کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہوئے، 38 کے مجموعے پر روز ٹیلر 3 رنز بناکر شاہین آفریدی کی گیندپر سرفراز کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہوگئے،ٹام لیتھم بھی صرف ایک رن بنا کر شاہین آفریدی کی تیسری وکٹ بنے ،جمی نیشم اور کین ولیمسن نے پانچویں وکٹ کیلئے37رنز جوڑے جس کے بعد ولیمسن 41رنز بنا کر شاداب خان کا شکار بنے،نیشم اور گرینڈہوم نے پاکستانی بولرز کے سامنے بھرپور مزاحمت کی اور چھٹی وکٹ کی شراکت میں132رنز جوڑے اور اس دوران دونوں کھلاڑیوں نے اپنی اپنی نصف سنچریاں مکمل کیں، ڈی گرینڈ ہوم 64رنز بنا کر رن آﺅٹ ہوئے،پاکستانی بولرز نے آخری 10 اوورز میں 85 رنز دیے اور صرف ایک وکٹ حاصل کی، نیوزی لینڈ کے آل راﺅنڈر جیمز نیشم نے بحرانی کیفیت میں شاندار بیٹنگ کی اور 97 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیلی،پاکستان کی جانب سے شاہین شاہ آفریدی نے 3 جبکہ محمد عامر اور شاداب خان نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

فاسٹ بولر وہاب ریاض ایک بار پھر مہنگے ثابت ہوئے، انہوں نے 10 اوورز میں 55 رنز دیے اور کوئی وکٹ نہ لے سکے۔ محمد عامر اس میچ میں سب سے زیادہ 67 رنز دینے والے بولر تھے۔آج کے میچ کے لیے قومی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی، گیارہ رکنی ٹیم امام الحق، فخر زمان، بابر اعظم، محمد حفیظ، حارث سہیل، کپتان سرفراز، شاداب خان، عماد وسیم، محمد عامر، وہاب ریاض اور شاہین شاہ آفریدی پر مشتمل ہے۔