ڈیرہ شہر ومضافاتی علاقوں میں کھلے عام غیر معیاری تیل سے تیار کردہ نمکو، پاپڑ اور چپس کی سرعام فروخت جاری

جمعہ جولائی 17:40

ڈیرہ اسماعیل خان ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 12 جولائی2019ء) ڈیرہ شہر ومضافاتی علاقوں میں کھلے عام غیر معیاری تیل سے تیار کردہ نمکو، پاپڑ اور چپس کی سرعام فروخت جاری۔پیک شدہ غیر معیاری بغیر رجسٹرڈ اور بغیر مدت معیاد کے گھریلو نجی خود ساختہ منی فیکٹریوں میں تیار شدہ نمکو، پاپڑوں اور چپس سے شہری بالخصوص بچے معدہ، یرقان، جگر اور گلے پیٹ کی بیماریوں میں مبتلا ہورہے ہیں،شہریوں نے ڈی جیخیبر پختونخوا، فوڈ اتھارٹی سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈیرہ شہر وگردونواح میں دکانوں سمیت بس اڈوں اور ٹک شاپوں پر مضر صحت پیک شدہ پاپڑوں، نمکو اور چپس کی فروخت سر عام جاری، فروخت کی جانے والی نمکو چپس اور پاپڑ جو کہ مقامی طور پر تیار کئے جاتے ہیں،پیکنگ پر مدت معیاد بھی درج نہیں ہوتی، گھریلو طور پر خود ساختہ منی فیکٹریوں میں مضر صحت تیل اور مضر صحت مصالحہ جات سے تیار شدہ مذکورہ اشیاء جو کہ شہر و مضافات میں دکانوں پر فروخت کی جاتی ہیں وہاں پر سکولوں، کالجوں کی کینٹینوں، پٹرول پمپس پر واقع ٹک شاپس،اور بس اڈوں سمیت بیکریوں پر سرعام فروخت کی جارہی ہے۔

(جاری ہے)

جس کے استعمال سے شہری، بچے معدے سمیت جگر کی بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں،شہریوں نے ڈی جی خیبر پختونخوا اور فوڈ اتھارٹی سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیاہے

متعلقہ عنوان :