عید سے پہلے مسلم لیگ ن کے مزید تین رہنماؤں کی گرفتاری کا امکان

احسن اقبال، رانا مشہود اور خواجہ آصف کے خلاف نیب نے ثبوت حاصل کر لیے

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین جمعہ اگست 13:45

عید سے پہلے مسلم لیگ ن کے مزید تین رہنماؤں کی گرفتاری کا امکان
لاہور (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 09 اگست 2019ء) : پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کی گرفتاری کے بعد مزید تین رہنماؤں کی گرفتاری کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔ تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کے ان تین رہنماؤں میں احسن اقبال ، خواجہ آصف اور رانا مشہود شامل ہیں۔ ذرائع نے امکان ظاہر کیا کہ عید الاضحیٰ سے قبل مسلم لیگ ن کے رہنماﺅں احسن اقبال ،رانا مشہود اور خواجہ آصف جبکہ پاکستان پیپلز پارٹی کے سید خورشید شاہ کو بھی گرفتار کیا جاسکتا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ ان رہنماﺅں کے خلاف نیب کو کافی ثبوت موصول ہو چکے ہیں ۔ ذرائع کے مطابق نیب میں بعض حکومتی وزراءاور دیگر رہنماﺅں کے خلاف بھی تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے جن پر کافی پیشرفت ہوچکی ہے ۔ نیب ترجمان کے مطابق نیب چئیرمین جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی سربراہی میں بلا تفریق احتساب کا عمل جاری رکھے ہوئے ہے ۔

(جاری ہے)

تمام کارروائیاں قانون کے مطابق جاری ہیں۔

نیب جب ضروری سمجھتا ہے تو کسی کو گرفتار کرتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ نیب انتقام پر یقین نہیں رکھتا اور نہ ہی کسی کی ڈکٹیشن لیتا ہے ۔ نیب ترجمان کے مطابق مسلم لیگ ن کی رہنما مریم نواز اور یوسف عباس کو چودھری شوگر ملز کیس میں گرفتار کیا گیا ۔ واضح رہے کہ مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کو گذشتہ روز نیب نے کوٹ لکھپت جیل کے باہر سے گرفتار کیا، جس کے بعد آج صبح انہیں احتساب عدالت کے سامنے پیش کیا گیا۔

مریم نواز اور یوسف عباس کو احتساب عدالت کے جج جوادالحسن کے روبروپیش کیا گیا۔ نیب نے مریم نواز کے 15 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی تھی جس پر عدالت نے فیصلہ محفوظ کیا۔ کچھ دیر بعد نیب کورٹ نے محفوظ فیصلہ سناتے ہوئے مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کو 21 اگست تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کر دیا۔