فیصل آباد: تھانہ ملت ٹاؤن پولیس نے خاتون پر مبینہ تشدد کرنے کے بعد سر کے بال کاٹ دئیے

بدھ اگست 13:31

فیصل آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 28 اگست2019ء) فیصل آباد: تھانہ ملت ٹاؤن پولیس نے خاتون پر مبینہ تشدد کرنے کے بعد سر کے بال کاٹ دئیے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق فیصل آباد میں خاتون نے بااثر ملزمان کے خلاف اپنی بچی کے اغوا کا مقدمہ درج کرایا تو پولیس بھی مخالفین کی حمایت میں بول پڑی۔متاثرہ خاتون رابعہ نے الزام عائد کیا کہ پولیس کی جانب سے مخالفین سے صلح پر مجبور کیا گیا اور انکار کرنے پر خاتون پولیس افسر ایس ایچ او ارم شاہ نے قینچی سے سر کے بال کاٹ دئیے۔

(جاری ہے)

خاتون کے مطابق مخالف پارٹی کے کہنے پر پولیس نے مجھے بدترین تشدد کا نشانہ بنایا۔متاثرہ خاتون نے انصاف کے حصول کے لیے سی پی او کو درخواست دے دی جبکہ علاقہ مجسٹریٹ تھانہ ویمن نے متاثرہ خاتون کی میڈیکل رپورٹ طلب کر لی۔دو روز قبل انکشاف ہوا کہ لاہور میں پولیس اہلکار خاتون کے ذریعے شہریوں کو بلیک میل کرنے اور لوٹنے میں ملوث ہیں۔متاثرہ شہری ارشد کے مطابق خاتون نے ان کی دکان پر آکر 10 ہزار روپے دینے کا مطالبہ کیا اور بعد ازاں پولیس کو بلا لیا۔ پولیس اہلکار ’’کھاری‘‘ نے ساتھیوں کے ساتھ انہیں سرعام تشدد کا نشانہ بنایا اور بعد ازاں تھانے لے جا کر 40 ہزار روپے لے کر چھوڑا۔

متعلقہ عنوان :