اگر بھارت باز نہ آیا تو ہندوستان کی طرف سے آنے والی تمام فلائٹیں بند کرسکتے ہیں، وفاقی وزیر برائے ہوا بازی سرور خان

بھارتی صدر کیلئے فضائی حدود بند کر دی ہے ،واپسی پر بھی استعمال کی اجازت نہیں دینگے ،وفاقی کی میڈیا سے بات چیت

ہفتہ ستمبر 18:56

اگر بھارت باز نہ آیا تو ہندوستان کی طرف سے آنے والی تمام فلائٹیں بند ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 07 ستمبر2019ء) وفاقی وزیر برائے ہوابازی سرور خان ے کہا ہے کہ اگر بھارت باز نہ آیا تو ہندوستان کی طرف سے آنے والی تمام فلائٹیں بند کرسکتے ہیں، بھارتی صدر کیلئے فضائی حدود بند کر دی ہے ،واپسی پر بھی استعمال کی اجازت نہیں دینگے ۔ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ 5 اگست 2019 سے کشمیر پر ہندوستان نے قبضہ کیا ہوا ہے۔

انہوںنے کہاکہ وہاں انسانی حقوق پامال ہورہے ہیں،مختلف 4000 لیڈران کو گرفتار کرکے جیل میں رکھا گیا ہے۔ انہوںنے کہاکہ کشمیری علاج معالجے سے قاصر ہیں وہ باہر نہیں نکل رہے۔انہوںنے کہاکہ مختلف ممالک روزانہ کی بنیاد پر وزیراعظم رابطہ کرتے ہیں۔انہوںنے کہاکہ پوری قوم کے جذبات تھے کہ جیسے ہندوستان کے ساتھ تجارت معطل کیا گیا،سفارتی تعلقات نچلی سطح تک لے گئے۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ آئس لینڈ جانے کے لیے ان کی فارن منسٹری نے ہماری فارن منسٹری کو درخواست کی۔انہوںنے کہاکہ گزشتہ روز بھارتی صدر نے پاکستانی فضاؤں سے آئس لینڈ کیلئے سفر کرنا تھا،ہم نے فیصلہ کیا کہ انہیں نہیں گزرنے دینگے۔انہوںنے کہاکہ بھارت آنے والی تمام فلائٹیں بھی ہم بند کرسکتے ہیں۔انہوںنے کہاکہ اگر ہندوستان باز نہ آیا تو ہم یہ اقدام بھی اٹھا سکتے ہیں۔

انہوںنے کہاکہ بھارتی صدر واپسی پر بھی یہ فضائی حدود نہیں استعمال کرسکتے۔انہوںنے کہاکہ ہندوستان جیسا کررہا ہمیں بھی عملی طور پر مظاہرہ کرنا چاہیے، انڈیا کی ہر پرواز ہماری ائیر سپیس استعمال کرتے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ ہم جارحیت کو روکنے کی کوشش کررہے ہیں جس کیلئے سلامتی کونسل سے بھی رابطہ کیا گیا۔انہوںنے کہاکہ اقوام متحدہ کا دوہرا معیار بتانے وزیراعظم جارہے ہیں۔ افغانستان ہمارا اسلامی ملک ہیں ان کے ساتھ ہمارا اچھا تعلق ہے