Live Updates

اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کا مقبوضہ کشمیر میں کرفیو اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر گہری تشویش کا اظہارپاکستان کی اہم سفارتی کامیابی ہے

مسئلہ کشمیر پر پاکستان کی متحرک سفارت کاری نے مثبت نتائج دکھانا شروع کر دیئے، دُنیا پر بھارت کا بدنما چہرہ ہرروززیادہ سے زیادہ عیاں ہو رہا ہے، مسئلہ کشمیر کے حل کی جانب روزانہ کی بنیاد پر پیش رفت ہو رہی ہے ، علی امین گنڈا پور

بدھ ستمبر 16:39

اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کا مقبوضہ کشمیر میں کرفیو اور انسانی ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 11 ستمبر2019ء) وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین خان گنڈا پورنے اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کونسل کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں کرفیو اور بھارت کی طرف سے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر گہری تشویش کے اظہار کوپاکستان کی ایک اہم سفارتی کامیابی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر پر پاکستان کی متحرک سفارت کاری اپنے مثبت نتائج دکھانا شروع ہو گئی ہے، دُنیا پر بھارت کا بدنما چہرہ ہرروززیادہ سے زیادہ عیاں ہو رہا ہے، مسئلہ کشمیر کے حل کی جانب روزانہ کی بنیاد پر پیش رفت ہو رہی ہے اور پاکستان کی متحرک سفارت کاری کے نتیجے میں بین الاقوامی ضمیر آہستہ آہستہ جاگناشروع ہو گیا ہے۔

بدھ کو اپنے ایک بیان میںانہوںنے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ظلم وتشدد کاسلسلہ متواترجاری ہے اور ایک ماہ سے زائد جاری کرفیو سے مقبوضہ کشمیر کے عوام کا معاشی قتل کیا جارہا ہے۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ مقبوضہ کشمیر کے عوام کو کمیونیکیشن کی سہولیات تو درکنار ادویات اور خوراک جیسی بنیادی ضروریات کی اشد کمی کا سامنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ نرنیدر مودی نے خطے کو جس ہندو انتہاپسندی کی بھینٹ چڑھایا ہے اس سے خطے کی سلامتی کے حوالے سے نتائج بڑے خطرناک ہوں گے۔

انہوںنے کہاکہ بھارت کی مکاری اور ہٹ دھرمی کا اندازہ اس سے لگایا جاسکتا ہے کہ دُنیا کے اہم ممالک مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے ثالثی کی پیشکش کر رہے ہیں اور بھارت کبھی اس مسئلے کو اپنا اندرونی مسئلہ اور کبھی اس مسئلے کو دوطرفہ مسئلہ قرار دے کے مذاکرات کی راہ سے فرار حاصل کیے ہوئے ہے انہوںنے کہاکہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار دادیں ہوں یا پھر دوطرفہ مذاکرات کا معاملہ ہو بھارت نے ہمیشہ مسئلہ کشمیر پر ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کیا ہے۔

انہوںنے کہاکہ وقت آچکا ہے کہ عالمی برادری بھارتی ہٹ دھرم رویے اور ہندو انتہا پسندفاشسٹ ایجنڈے کا فوری نوٹس لیتے ہوئے مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے متحرک کردار ادا کرے۔وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان کا بچہ بچہ جذبہ حسینی سے سرشار ہے اور باطل قوتوں کے سامنے کسی صورت سر نہیں جھکائیں گے ۔انہوںنے کہاکہ بھارت کو یہ جان لینا چاہیے کہ وہ سات دہائیوں سے کشمیریوں کو زیر کرنے میں ناکام رہا ہے تو اس کے ظالمانہ ہتھکنڈے آگے بھی کشمیریوں کو کسی صورت میں اپنے حق خودارادیت کے مطالبے سے دستبردار نہیں کر اسکتے اور وہ بھارت سے اپنا حق خو دارادیت چھین ک رہیں گے۔

انہوںنے ایک با رپھر اس عزم کا اظہار کیا کہ حق خود ارادیت کے حصول تک کشمیریوں کی حمایت جاری رکھی جائے گی اور کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔
تنازعہ مقبوضہ کشمیر کی بھڑکتی ہوئی آگ سے متعلق تازہ ترین معلومات